اسپرے کریں اور 8 گھنٹے کورونا سے محفوظ رہیں

سائنس دانوں نے کورونا سے 8 گھنٹے تک تحفظ فراہم کرنے والا ناک کا اسپرے تیار کرلیا ہے۔

برطانوی ذرائع ابلاغ کے مطابق اس نیزل اسپرے کو فن لینڈ کی ہیلسنکی یونیورسٹی کے سائنس دانوں نے ایجاد کیا ہے، جس کی مدد سے کورونا کے لیے آسان ہدف سمجھے جانے والے افراد کو مختصر مدت کے لیے کورونا سے تحفظ فراہم کیا جاسکتا ہے۔

سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ لیباریٹری میں ہونے والی تحقیق میں یہ ناک کا اسپرے 8 گھنٹے تک کورونا وائرس کو روکنے میں کام یاب رہا ہے۔ اس نئے طریقہ علاج کی سب سے خاص بات یہ ہے کہ اسے کورونا کے تمام ویریئنٹ کے لیے استعمال کیا جاسکتا ہے۔

اس نیزل اسپرے کا مقصد امیون کمپرومائزڈ ( ایسے افراد جن کا مدافعتی نظام کینسر، آرگن ٹرانسپلانٹ، ایڈز اور دیگر کنڈیشنز کی وجہ سے مدافعت کے قابل نہیں ہوتا ) مریضوں اور دیگر افراد جن میں کووڈ میں مبتلا ہونے کے خطرات زیادہ ہوں کے لیے بنایا گیا ہے۔

امیون کمپرو مائزڈ افراد میں کورونا میں مبتلا ہونے کے امکانات بہت زیادہ ہیں کیو ںکہ ویکسین ان کے مدافعتی نظام کو وائرس کے خلاف بہت زیادہ تحفظ فراہم نہیں کر سکتی۔

لیب میں جانوروں پر ہونے والے مطالعوں میں اس اسپرے نے کورونا کی تمام اقسام کے خلاف اچھی کارکردگی کا مظاہر ہ کیا ہے۔ تاہم یہ طریقہ علاج ویکسین کا نعم البدل نہیں ہو سکتا۔ اسے ایسے افراد کے تحفظ کے لیے موثر طریقے سے استعمال کیا جاسکتا ہے، جن کے مدافعتی نظام کو اضافی تحفظ کی ضرورت ہے۔

لیب میں ہونے والے تجربات سے ظاہر ہوتا ہے کہ یہ اسپرے ناک میں وائرس کو اپنی نقلیں تیار کرنے سے روک دیتا ہے۔ جس کی وجہ سے اس کے پھیلنے اور سفر کرنے کی صلاحیت ختم ہو جاتی ہے۔