وزیر خزانہ کے بیان پر برہمی

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) قومی احتساب بیورو (نیب) نے وزیر خزانہ شوکت ترین کے بیان کو بے بنیاد، من گھڑت اور حقائق کے منافی قرار دیتے ہوئے انھیں آرڈیننس کا مکمل جائزہ لینے کا مشورہ دیدیا ہے۔احتساب بیورو کی جانب سے جاری اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ 1273 ریفرنسز عدالتوں میں زیر سماعت ہیں جن میں سے بیوروکریسی کے خلاف مقدمات نہ ہونے کے برابر ہیں۔ الزام تراشی کا مقصد ادارے کی حوصلہ شکنی ہے۔ آئین کے مطابق کام کرنے والوں کو ڈرنے کی کوئی ضرورت نہیں ہے وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین نے نیب کی وجہ سے بیوروکریسی کے کام نہ کرنے سے متعلق بیان دیا تھا۔ تاہم نیب کی جانب سے اس کی شدید مذمت کرتے ہوئے اس کی تردید کی گئی ہے۔