Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
پیر 01 جون 2020
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

یوم علی کے جلوس کے اختتام پر پولیس عزاداروں پر ٹوٹ پڑی

ویب ڈیسک هفته 16 مئی 2020
یوم علی کے جلوس کے اختتام  پر پولیس عزاداروں پر ٹوٹ پڑی

کراچی(کرائم رپورٹر راؤعمران)یوم علی کے جلوس کی اجازت کے بعد دو ہزار سے زائد اہلکاروں کو جلوس کی سیکورٹی پر مامور کیا گیا جلوس کے اختتام کے بعد واپس جانیوالے عزاداروں پر پولیس ٹوٹ پڑی 200 سے زائد افراد کو گرفتار کر لیا سولجر بازار،بغدادی،پریڈی، آرام باغ سمیت مختلف تھانوں میں جلوس نکالنے پر مقدمات درج کرلئے تفصیلات کے مطابق لاک ڈاون کی خلاف ورزی،پر جلوس کے شرکا کے خلاف پولیس کا کریک ڈاون پولیس نے دوسو زائد افراد کو گرفتار کر لیا ساوتھ زون میں دفعہ 144کی خلاف ورزی پر 110 افراد کو گرفتار کیا گیا ساوتھ اور سٹی زون میں 50 سے زائد افراد کے خلاف مقدمات بھی درج تمام افراد کو جلوس نکلانے پر گرفتار کیا گیا: ایک ساتھ پانچ افراد کے جمع ہونے پر پابندی ہے،گرفتاریاں موٹر سائیکل سواروں رکشہ میں سوار اور پیدل چلنے والے افراد شامل ہیں سولجر بازار تھانے میں جلوس کے منتظمین اور 27 شرکا کے خلاف مقدمہ درج کرلیا جبکہبغدادی تھانے میں جلوس کے منتظمین اور شرکا کے خلاف مقدمہ درج مختلف تھانوں کے لاک اپ عزاداروں سے بھر گئی لاک اپ میں عزادار یاعلی کے نعرے لگارہے تھے اورماتم بھی کررہے تھے قبل ازیں سیکرٹری جنرل یم ڈبلیو ایم سندھعلامہ باقر عباس زیدی نے کہا ہے کہ ٍسندھ حکومت انتظامیہ نے یوم علی ع کے جلوسوں میں رکاوٹ بن کر یزیدی کر دار ادا کیا 200 سے زائد عزاداروں کی جلوس سے واپسی پر گرفتاری قابل مزمت ہے کراچی سمیت سندھ بھر میں ایس او پیز کے پابندی کے باوجود مجالس و جلوس ہائے عزاء میں رکاوٹ ڈالنے کی مذمت کرتے ہیں.حکومت فوری گرفتار عزاداروں کو رہا کرے انہوں نے مزید کہا کہ یوم علی ع کے جلوس ایس او پیز کے تحت نکالے گئے ہیں یوم علی کے جلوسوں پر پابندی نہیں لگائی جا سکتی عزاداری کے پروگرامات ہمارا قانونی و آئینی حق ہے مرکزی یوم علی کے جلوس سے واپسی پر گھر جاتے ہوئے عزاداروں کو دھوکے سے گرفتار کیا گیاوزیرا علی سندھ و حکومت شہر میں فرقہ وارانہ تصادم کرانا چاہتے ہیں اہل وزیر اعلی کو فوری بر طرف کیا جائے سندھ حکومت میں اب بھی کالعدم تکفیری جماعتوں کے وزراء موجود ہیں صدر اور وزیر اعظم سے ملاقات میں یوم علی ع کے پروگراموں کے انعقاد کی تائید کی گئی تھیی ملک میں بسنے والے آٹھ کروڑ تشیع کے مذہبی جذبات کو مجروح کیا گیا ملت تشیع ملک کی ایک ذمہ دار قوم ہے ہم اپنی مذہبی آزادی کسی کو سلب کرنے کی اجازت نہیں دیں عزاداری کے پروگراموں کے حکومتی ایس اوپیز کی پاسداری کرتے ہوئے منایا گیا ملت تشیع ایک پ ±رامن قوم ہے اور قانون کی پاسداری کو فرض سمجھتی ہے ملک وقوم کی سلامتی دانشمندانہ فیصلوں کا تقاضہ کرتی ہے سندھ حکومت عزاداروں کو ہراساں کرکے کی یزیدی سلوک کررہی۔ گرفتار عزاداروں کو فوری رہا کع کے ایف آئی واپس لیے جائیں کراچی سمیت بے گناہ عزاداروں رہا نہیں کیا گیا تو پوری شیعہ قوم وزیر اعلی ہاوس کا گھیراو کریں گی۔

(942 بار دیکھا گیا)

تبصرے