Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
جمعه 22 نومبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

کراچی میں گندگی، غلاظت کے ڈھیر

قومی نیوز منگل 20  اگست 2019
کراچی میں گندگی، غلاظت کے ڈھیر

کراچی(اسٹاف رپورٹر) کراچی میں گندگی غلاظت کے ڈھیرموجود، سیوریج کا پانی صاف نہ ہونے سے متعدد علاقوں میں تعفن اور بدبو نے لوگوں کا جینا دو بھر کردیا ہے ۔

محکمہ بلدیات حکومت سندھ ، کے ایم سی اور ڈی ایم سیز عید کے بعد آ ٹھ روز گزرنے کے باوجود صورتحال پر قابو پانے میں ناکام دکھائی دیتے ہیں

اقتدار میں شامل سیاسی پارٹیاں روزانہ ایک دوسرے پہ الزام تراشی اور دوسرے کو قصوروار قرار دینے میں مصروف رہتی ہیں شہری سراپا احتجاج ہیں

ان کا کہنا ہے کہ بیان بازی بہت ہوگئی عملی اقدامات کرنا ہوں گے اہم شاہراہوں پر پڑنے والے گڑھوں کی تاحال کے ایم سی یا ڈی ایم سی سیز نے مرمت کا آ غاز نہیں کیا ہے جس سے نہ صرف ٹریفک کی روانی متاثر ہورہی ہے

یہ بھی پڑھیں : پارکنگ فیس کے نام پر شہریوں سے ”لوٹ مار“

حادثات بڑھنے کے ساتھ گاڑیوں کو نقصان پہنچ رہا ہے متعدد علاقوں میں کچرے کے ڈھیر، آ لائشیں اور سیوریج کا گندہ پانی جمع ہے مکھی مچھروں کی بہتات سے امراض میں اضافہ ہوگیا ہے

اب تک کسی ادارے کی جانب سے اسپرے کاآ غاز نہیں کیا گیا ہے کچرے کے ڈھیر اور ناقص صفائی ستھرائی کا نظام اس وقت کورنگی ضلع وسطی، غربی، ملیر اور جنوبی کے بعض علاقوں میں بہت زیادہ خراب ہے

نارتھ ناظم آ باد میں ضیا الدین اسپتال سے لنڈی کوتل تک برساتی نالے کی صفائی کے بعد کچرا تین دن سے سڑک پر موجود ہے

سندھ سالڈویسٹ مینجمنٹ اور ڈی ایم سیز اور کنٹونمنٹ بورڈ شہر میں جمع ہونے والے کچرے کو صاف نہیں کرسکے آ بادیوں میں شاہراہوں کے اطراف اور سینٹرل میڈین پر کچرے کے ڈھیر لگے ہوئے ہیں

یہ بھی پڑھیں : جنرل باجوہ مزید 3سال کیلئے آرمی چیف مقرر

بارش کا پانی سیوریج لائنوں میں ڈالنے سے کچرا، ریت مٹی وغیرہ بھرنے سےلائنیں بند ہوگئی ہیں اور گٹرابل رہے ہیں

سیوریج سے متاثرہ علاقوں میں بلاک5 کلفٹن، لیاقت آ باد ڈاکخانہ فلائی اوور کے نیچے، سیکٹرفائیو ایف نیوکراچی، گلشن اقبال بلاک5 ڈسکوبیکری کے سامنے ، پی ای سی ایچ ایس بلاک2، شہیدملت روڈ پر میڈی کیئر کے قریب، سندھی مسلم سوسائٹی، کراچی ایڈمن سوسائٹی شامل ہیں

اورنگی ٹاﺅن ، ملیرکالابورڈ، ماڈل کالونی، شاہ فیصل کالونی، خالدآ باد فردوس کالونی گلبہار، لیاری میں بہارکالونی، آ گرہ تاج کالونی، محمدی کالونی فیڈرل بی ایریا، بلاک بی نارتھ ناظم آ باد ، بلاک13 گلبرگ، بلاک21 ایف بی ایریااورکیماڑی بھی متاثر ہیں

یہ بھی پڑھیں : ادارے ناکام،کراچی آلائشوں کاشہربن گیا

واٹربورڈ ترجمان کا کہنا ہے کہ مذکورہ علاقوں میں ٹیمیں مسلسل کام کررہی ہیں اور شکایات کو جلد دور کردیا جائے گا

شہریوں کا کہنا ہے کہ حکومتی ادارے جب تک اجتمائی طور پر مسائل سے نمٹنے کے لیے کام نہیں کرتے صورتحال بہتر ہونے کے بجائے مزید خراب ہوسکتی ہے۔

(781 بار دیکھا گیا)

تبصرے