Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
پیر 16  ستمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

آن لائن ٹیکسی پر’’ ٹیکس بم‘‘ گرانے کی تیاری

ویب ڈیسک منگل 25 جون 2019
آن لائن ٹیکسی پر’’ ٹیکس بم‘‘ گرانے کی تیاری

کراچی …سندھ حکومت نے آئندہ مالی سال 20-2019ء کا بجٹ پیش کیا جس میں ٹیکسوں کی بھرمار کر دی گئی ہے۔

سندھ حکومت نے آن لائن ٹیکسی سروسز پر بھی جی ایس ٹی عائد کرنے کی تیاری کر لی ہے۔ اس ضمن میں مجوزہ فنانس بل میں آن لائن موٹرسائیکل، کار، ٹیکسی سروس پر جی ایس ٹی عائد کرنیکی تجویز پیش کی گئی ہے۔

فنانس بل 20-2019ء میں آن لائن کمپنی کے ڈرائیورز پر 13 سے 26 فیصد ٹیکس عائد کرنے کی تجویز پیش کی گئی۔

سندھ حکومت کے اس فیصلے سے جہاں ٹیکس ریونیو میں اضافہ ہو گا وہیں ان ٹیکسز کا بوجھ عام عوام پر بھی پڑے گا جو روزمرہ کی نقل و حرکت کے لیے ان آن لائن ٹیکسی سروسز کا استعمال کرتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : پیٹرول 14.37 روپے مہنگا کرنے کی سفارش

ان ٹیکسز کے لاگو ہونے کے بعد تمام آن لائن کمپنیاں اپنے کرایوں پر بھی نظر ثانی کریں گی جس کے بعد قوی امکان ہے کہ ان کرایوں میں اضافہ کر دیا جائے گا جس کا براہ راست بوجھ عوام اور آن لائن سروسز استعمال کرنے والے صارفین پر پڑے گا۔

کیونکہ کرایوں میں اضافے سے ان سروسز کو استعمال کرنا ہر ایک کی بساط سے باہر ہو جائے گا اور پھر بالآخر ان کمپنیوں کو اپنا کاروبار بند کرنا پڑے گا۔ ایسا ہونے سے کئی افراد کے بے روزگار ہونے کا خدشہ بھی اپنی جگہ موجود ہے۔

صارفین نے سندھ حکومت کی اس تجویز کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ سندھ حکومت کے ان اقدامات کو دیکھ کر ایسا لگ رہا ہے کہ صوبائی حکومت کا مقصد آن لائن کمپنیوں کا کاروبار ٹھپ کرنا ہے۔

(1747 بار دیکھا گیا)

تبصرے