Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
اتوار 15  ستمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

ایرانی بینکوں میں پیسے نکلوانے والوں کا ہجوم

ویب ڈیسک جمعرات 25 اپریل 2019
ایرانی بینکوں میں پیسے نکلوانے والوں کا ہجوم

واشنگٹن/ تہران… ایران کے خلاف پابندیوں پر عملدرآمد کی تاریخ قریب آتے ہی امریکی صدر کے فیصلے کے اثرات دنیا بھر میں ظاہر ہونے لگے۔ عالمی مارکیٹ میں تیل کی قیمت سال کی بلند ترین سطح 74.25 ڈالر فی بیرل تک پہنچ گئی۔ ایران میں صورت حال زیادہ سنگین ہے جہاں کرنسی کی قیمت تیزی سے گررہی ہے۔

بینکوں میں پیسے نکلوانے والوں کا ہجوم ہے جبکہ لوگوں نے خوراک ذخیرہ کرنا شروع کردی ہے۔ ایک 55سالہ خاتون نے بتایا کہ طلب بڑھنے کی وجہ سے سبزیوں اور پھلوں کے نرخ بھی آسمان کو چھونے لگے ہیں۔ محدود آمدن کی وجہ سے زیادہ خریداری بھی ناممکن ہوگئی ہے۔ تہران سے موصولہ اطلاعات کے مطابق شہریوں کو پیسے نکلوانے میں شدید مشکلات کا سامنا ہے۔

بینکوں کے سامنے خواتین کی بھی لمبی قطاریں نظر آتی ہیں۔ ایک رپورٹ کے مطابق چند برسوں میں ایرانی کرنسی کی قیمت 300 فصد تک گرچکی ہے۔ اس وقت ایک ڈالر میں 13 ہزار 850 ریال مل رہے ہیں۔ برطانوی پائونڈ 18 ہزار جبکہ یورو 15 ہزار 700 میں دستیاب ہے۔

یہ بھی پڑھیں : ایرانی تیل پرامریکی پابندی ،بڑا بحران شروع

فرانسیسی خبر ایجنسی کے مطابق 28 سالہ فنی ماہر نے بتایا کہ اس امریکی پابندیوں نے عام لوگوں کو مشکل میں ڈال دیا ہے‘ ریال کی قیمت مزید گرے گی۔ دوسری جانب ایران کے رہبر اعلیٰ آیت اللہ علی خامنہ ای نے کہا ہے کہ ایران جتنا چاہے تیل برآمد کرسکتا ہے اور اس بارے میں کسی پابندی کو خاطر میں نہیں لایا جائے گا

جبکہ صدر حسن روحانی کا کہنا ہے کہ مذاکرات اور سفارتکاری کا ہمیشہ سے ایران کے ترجیح رہے ہیں لیکن ایران نے جنگ اور دفاع سے بھی کبھی غفلت نہیں برتی۔ امریکہ سے اب اسی صورت مذاکرات ہوں گے جب وہ ایران پر دبائو ڈالنا بند کرے اور اپنے ماضی کے کردار پر معافی مانگے۔

(536 بار دیکھا گیا)

تبصرے