Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
جمعه 26 اپریل 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

بلیک ہول کی تصویرنے 29 سالہ سائنسدان کو مقبول کردیا

ویب ڈیسک جمعه 12 اپریل 2019
بلیک ہول کی تصویرنے 29 سالہ سائنسدان کو مقبول کردیا

کراچی … ماہرین فلکیات کی جانب سے اب تک کے دریافت ہونے والے سب سے بڑے بلیک ہول کی تصویر کھینچی جا چکی ہے لیکن یہ تصویر اس قدر بڑی تھی کہ اسے انٹرنیٹ کے ذریعے ایک کمپیوٹر پر جمع کرنا ممکن نہیں تھا۔

یہی وجہ تھی کہ تصویر کو کئی ہارڈ ڈسکوں پر محفوظ کرکے امریکا کے شہر بوسٹن اور جرمنی کے شہر بون بھیج دیا گیا جہاں اسے پراسیس کرکے اس کے مختلف حصوں کو جوڑ کر ایک تصویر بنائی گئی۔

یہ بھی پڑھیں : ماہرین ’بلیک ہول‘ کی تصویر لینے میں کامیاب

یہ تصویر پراسیس کرنے میں اہم کردار کمپیوٹر سائنس کے شعبے سے تعلق رکھنے والی سائنسدان کیتھرین بومن نے ادا کیا جن کے تیار کردہ ایلگورتھم کے ذریعے ہی اس تصویر کو پراسیس کرنا ممکن ہو پایا۔

اس تصویر کے جاری ہونے کے بعد سے کیتھرین کو دنیا بھر سے مبارکباد کے پیغامات موصول ہو رہے ہیں اور وہ ایک مقبول شخصیت بن چکی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : بندروں میں انسانی دماغ کے خلیے شامل

سائنس میگزین کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اس ایلگورتھم کے متعلق انہوں نے صرف اپنے دوستوں کو بتایا تھا۔

29 سال کی کیتھرین بومن امریکا کی ہارورڈ یونیورسٹی کے سمتھ سونین سینٹر فار آ سٹرو فزکس کی پوسٹ ڈاکٹورل (پی ایچ ڈی کے بعد مزید ریسرچ) محقق ہیں اور وہ گزشتہ 6 سال سے یعنی جب وہ ایم آ ئی ٹی میں گریجویشن کر رہی تھیں اس وقت سے اس ایلگورتھم پر کام کر رہی تھیں۔

(98 بار دیکھا گیا)

تبصرے