Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
پیر 24 جون 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

پریمی جوڑے نے پھانسی لگا لی

ویب ڈیسک جمعه 05 اپریل 2019
پریمی جوڑے نے پھانسی لگا لی

منگلی تھانہ کی حدود ورکشاپ روڈپر واڈ کی کے نواحی گائوں کے رہائشی اوڈ قوم سے تعلق رکھنے والے شادی شدہ جوڑے کی گھر کے باہر درخت میں لٹکی نعشیں، بتایا جاتاہے کہ دونوں میاں بیوی نے خودکشی کی ‘ واقعہ کی اطلاع منگلی تھانے پہنچنے پر منگلی تھانہ کے ایس ایچ او کے ہمراہ پولیس جائے وقوعہ پر پہنچی اور جائے وقوعہ کا معائنہ کرکے دونوں میاں بیوی جس میں انیش کمار اوڈ اور اس کی بیوی امیر زادی کی نعشوں کو درخت سے اتار کر پولیس نے اپنے قبضہ میں لے کر دونوں کی نعشیں ایمبولینس کے ذریعے سول اسپتال سانگھڑ پہنچایاگیا

واقعہ کی اطلاع ملتے ہی عزیز واقارب بڑی تعداد میں واقعہ والی جگہ اور سول اسپتال پہنچے ‘ جہاں پر ڈاکٹروں نے ضروری کارروائی کرنے کے بعد نعشیں ورثہ کے حوالے کردی ‘امیر زادی کے ورثہ نعش وصول کرنے کے بعد امیرزادی کی نعش لے کر پریس کلب سانگھڑ کے سامنے رکھ کر احتجاج کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ ہمارے ساتھ ظلم ہوا ہے‘ ہماری بیٹی امیرزادی کو ہلاک کیا گیاہے‘ جس میں ساس اور سسر ملوث ہیں‘ امیر زادی نے خود کشی نہیں کی‘ امیرزادی کے ورثہ پری اوڈ اور لکھیر اوڈنے بتایا کہ ہمیں اطلاع ملی کہ تمہاری بیٹی اور دامادنے خودکشی کرلی ہے

یہ بھی پڑھیں : خاکروب نے بیوی مار دی

ہم بھی سول اسپتال سانگھڑ پہنچے ڈاکٹروں نے رات کی تاریکی میں پوسٹ مارٹم کرنے کے بعد نعش ہمارے حوالے کردی گئی ‘ انہوںنے اعلیٰ حکام سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ہماری بیٹی امیر زادی کے سر میں چوٹ لگی ہوئی ہے ‘ امیرزادی کو سسرالیوں نے قتل کیاہے‘ ہماری بیٹی نے خودکشی نہیں کی ہے‘ منگلی پولیس ہماری کوئی فریاد سننے کو تیار نہیں ‘ پولیس نے رشوت لے کر خودکشی دکھائی گئی ہے ۔امیر زادی کے ورثہ نے سخت احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ واقعہ کی تحقیقات کی جائے‘ منگلی پولیس تھانے کے ایس ایچ او نے بتایا کہ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس نفری کے ہمراہ جائے وقوعہ پرپہنچے گھر کے باہر لگے درخت پر رسے سے بندھی 2 نعشوں جن میں ایک نعش انیش کمار اور دوسری نعش امیر زادی اوڈ کی رسی سے بندھی دونوں نعشیں پھندہ لگی درخت پر لٹکی ملی

دونوں نعشیں میاں بیوی کی تھی‘ جن کو سول اسپتال پہنچایا گیا ‘ انہوںنے مزید بتایا کہ علاقے کے لوگوں نے بھی بتایا کہ دونوں شادی شدہ جوڑے جس کی تقریباً 2 سال قبل شادی ہوئی تھی‘ اولاد کی نعمت سے محروم تھے‘ دونوں نے اجتماعی خودکشی کی ہے‘ پولیس کا مزید کہنا ہے کہ تحقیقات کی جارہی ہے‘ پوسٹ مارٹم رپورٹ آنیے پر مزید کارروائی کی جاسکتی ہے‘ ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ دونوں میاں بیوی 2 سالوں سے اولاد کی نعمت سے محروم تھے‘ ایسا لگتا ہے کہ دونوں نے دلبرداشتہ ہوکر اجتماعی خودکشی کرلی ہے‘ ورثاء نے پریس کلب کے سامنے صحافیوں کو بتایا کہ ہمارے نمائندے نے قومی اخبار حاجی عیدو خان جیلانی کو ان کی والدہ پری اور والد لکھیر اوڈ نے بتایا کہ ہماری بیٹی کے سرمیں زخم ہے‘ سسرالیوں نے قتل کیا ہے‘ ہماری بیٹی نے خودکشی نہیں کی‘ ورثاء کا احتجاج کہ ہمارے ساتھ انصاف کیا جائے‘ مکمل تحقیقات کی جائے ‘ تاہم آخری اطلاع تک کوئی گرفتاری عمل میں نہ آسکی۔

(172 بار دیکھا گیا)

تبصرے