Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
جمعه 24 مئی 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

جیل بھرو تحریک کےلئے تیار ہیں‘ بلاول بھٹو

ویب ڈیسک جمعرات 14 مارچ 2019
جیل بھرو تحریک کےلئے تیار ہیں‘ بلاول بھٹو

کراچی … چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ تین وفاقی وزرا کا تعلق کالعدم تنظیموں سے رہا ہے ان کو عہدوں سے ہٹایا جائے۔ کالعدم تنظیم کے اثاثہ جات پر جے آئی ٹی کیوں نہیں بنتی؟۔

اپوزیشن کیخلاف بولنے والے وزیراعظم مودی اور کالعدم تنظیموں کیخلاف ایک لفظ نہیں بولتے۔ کالعدم تنظیموں کے ہمدردر وفاقی کابینہ میں موجود ہیں۔

18 ویں ترمیم ریڈ لائن ہے ، اس کیخلاف وفاقی حکومت کو کوئی قدم نہیں اٹھانے دینگے ، سڑکوں پر نکلنے اور لانگ مارچ کیلئے تیار ہیں، جیل جانے سے بھی نہیں ڈرتے۔نیب کو سیاسی انجینئرنگ کیلئے استعمال نہ کیا جائے۔سندھ اسمبلی پرافسوس ناک حملہ کیاگیا کیونکہ ا سپیکر سندھ اسمبلی پیپلز پارٹی کا عہدہ نہیں۔

جعلی اکاؤنٹس جے آئی ٹی میں آئی ایس آئی کو شامل کرکے اسے سیاست زدہ کردیا گیا۔ پتا نہیں ہر بار انہیں کیوں شوق ہے کہ راولپنڈی میں ٹرائل ہو۔ مقدمہ سندھ اور بینک اکاؤنٹ سندھ کے لیکن کیس پنڈی شفٹ کیا جا رہا ہے ، راولپنڈی میں ایسا کیا ہے ؟ 6 ماہ سے ہماری کردار کشی کی جا رہی ہے۔ آرٹیکل 10 اے کے مطابق فری ٹرائل ہمارا حق ہے ،جمہوریت میں ایسے تو نظام نہیں چل سکتا۔

گزشتہ روز سپیکر سندھ اسمبلی سے ملاقات اور پارلیمانی پارٹی کے اجلاس کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ گرفتاری کے بعد آغا سراج درانی کے گھر پر چھاپہ مارنا یہی پیغام دیتا ہے کہ ان کیخلاف کوئی ثبوت موجود نہیں تھا اور ثبوت ڈھونڈنے کی کوشش کی گئی۔

یہ بھی پڑھیں : پی پی میں بغاوت کا خطرہ

جس طریقہ سے چادر اور چاردیواری کو پامال کیا گیا ہم برداشت نہیں کرینگے۔ ایک مرتبہ پھر مطالبہ کرتا ہوں کہ چیئرمین نیب اپنے ماتحت افسروں کا احتساب کریں ورنہ ہمیں ایکشن لینا پڑیگا۔ انہوں نے کہا کہ آپ تین مرتبہ وزیراعظم رہنے والے شخص کو گرفتار کرسکتے ہیں لیکن کالعدم تنظیم والوں کو نہیں؟ تین وزرا میں سے ایک کی کالعدم جماعت کے حق میں ویڈیو بھی موجود ہے۔ کالعدم تنظیم کا اہم رہنما الیکشن کے وقت وزیر خرانہ کیساتھ گھومتا رہا۔

کالعدم تنظیموں کو الیکشن میں حصہ لینے کی اجازت دیکر تحریک انصاف کو مدد دی گئی۔ دنیا کو پیغام دیا جا رہا کہ ہم ان تنظیموں کو این آر او دے رہے ہیں۔حکومت کالعدم تنظیموں کیخلاف کارروائی میں سنجیدہ نہیں۔علاوہ ازیں بلاول نے پارلیمانی پارٹی کے اجلاس کی صدارت کی اورارکان سندھ اسمبلی سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی حکومت پر الزام عائد کیا کہ وہ سندھ کی ترقی روکنا چاہتی ہے ، گیس اور پانی کا حق نہیں دیتی۔

علاوہ ازیں بلاول نے نوازشریف سے جیل میں ملاقات کے بعد وفاقی وزیر اطلاعات فوادچودھری کی جانب سے یوٹرن کے طعنے پرٹوئٹر پراپنے پیغام میں کہا کہ پہلے انسان بنو پھر سیاستدان بنو، انسانیت سیاست سے بالاتر ہے ، کسی کی تیمارداری کو عیادت تک ہی رکھنا چاہئے۔ دریں اثنابلاول کی پریس کانفرنس پر ردعمل میں وفاقی وزیراطلاعات فواد چوہدری نے کہا ہیکہ بلاول کی جیل بھرو تحریک کا خیر مقدم کرتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : تنخواہیں اورمراعات ’’بڑا بھائی‘‘ سب سے آگے

پیپلزپارٹی آج سے ہی جیل بھروتحریک شروع کردے ، آغازلاہورسے کیاجائے ،پنجاب میں ضمانتیں ضبط کرانیوالوں کو جیل میں ڈالیں ،پنجاب ،بلوچستان اورکے پی کی پیپلزپارٹی کیلئے ایک ہی بیرک کافی ہوگی۔زرداری سندھ میں جیسی حکومت چلا رہے ہیں لگتا ہے سب جیل جائینگے۔2

ہفتے میں نئے ایم ڈی پی ٹی وی تعینات کردیئے جائینگے ، ارشد خان کا نام مزید زیرغور نہیں،یوتھ لیگ کے کنونشن سے خطاب اور میڈیا سے بات چیت میں انہوں نے کہا کہ فوجی عدالتوں کے معاملے پر شاہ محمودکواپوزیشن سے رابطوں کی ذمہ داری دی گئی ہے۔

وزیراعظم آج نئی ویزہ پالیسی کا اعلان کررہے ہیں،پہلے مرحلے میں 5ممالک کیلئے ای ویزہ پالیسی متعارف کرارہے ہیں،170ممالک کو ای ویزہ، 90کوبزنس اور55کوارائیول کی سہولت ملے گی۔اس وقت سول ملٹری تعلقات مثالی ہیں،تمام ادارے ایک پیج پر ہیں،جون تک ایف اے ٹی ایف کی 70فیصدشرائط پوری کردی جائینگی۔

(89 بار دیکھا گیا)

تبصرے