Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
بدھ 20 نومبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

پہلاسرپرائز: پاکستان نے دوبھارتی طیارے مارگرائے

قومی نیوز بدھ 27 فروری 2019
پہلاسرپرائز: پاکستان نے دوبھارتی طیارے مارگرائے

اسلام آباد : پاکستانی فضائیہ کے لڑاکا طیاروں نے بھارتی حدود میں داخل ہو کر دو انڈین طیارے مارے گرائے اور ایک پائلٹ کو گرفتار کرلیا گیا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ نے بھارت کو جواب دینے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان ایئر فورس کے طیاروں نے لائن آف کنٹرول کے پار کارروائی کی جس کے نتیجے میں 2 بھارتی لڑاکا طیارے تباہ ہوگئے۔

ترجمان پاک فوج میجر جنرل آصف غفور نے بتایا کہ پاک فضائیہ کے دستوں نے ایک بھارتی پائلٹ کو گرفتار کرلیا جب کہ دو وہاں موجود ہیں۔

یہ خبر بھی پڑھیں : اب ہم سرپرائز دیں گےبھارت انتظار کرے

بھارتی میڈیا کے مطابق پاکستانی لڑاکا طیاروں نے جموں کشمیر کے ضلع راجوڑی میں نوشہرہ سیکٹر کے قریب دو لڑاکا طیارے مار گرائے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق پاکستانی طیاروں پر فضائی حدود کی خلاف ورزی کا الزام عائد کیا جارہا ہے۔

ترجمان دفتر خارجہ نے کہا ہےکہ ہم نے واضح وارننگ کے ساتھ دن کی روشنی میں کارروائی کی ہے اور پاکستان کو مجبور کیا گیا تو ہر صورتحال کیلئے تیار ہیں۔

ترجمان دفتر خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں پاک فضائیہ کی کارروائی کی تصدیق کرتے ہوئے کہا گیا ہےکہ پاک فضائیہ نےپاکستانی حدود میں رہتے ہوئے ایل او سی کے پار کارروائی کی، پاک فضائیہ کا یہ اقدام بھارت کے جاری جنگی جنون کے جواب میں نہیں تھا، کارروائی کا مطلب اپنے دفاع کا حق ہے۔

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق پاکستان نے شہری آبادی کو نشانہ نہیں بنایا، پاک فضائیہ کی کارروائی میں انسانی جانوں کے تحفظ کا خیال رکھا گیا، کارروائی کا مقصد دفاع کے حق کی صلاحیت اور عزم کا اظہار تھا، پاکستان صورتحال کو بگاڑنا نہیں چاہتا، اگر پاکستان کو مجبور کیا گیا تو پاکستان ہر صورتحال کے لیے تیار ہے۔

یہ بھی پڑھیں : کیمپ تھے ہی نہیں حملہ کہاں کیا؟عالمی میڈیا

ترجمان نے مزید بتایا کہ ہم دفاع کا نہ صرف حق رکھتے ہیں بلکہ بھرپور جوابی صلاحیت بھی رکھتے ہیں، کارروائی کا واحد مقصد ہمارے اس حق کا مظاہرہ تھا جو اپنے دفاع کیلئے حاصل ہے، ہمارا کشیدگی میں اضافے کا کوئی ارادہ نہیں لیکن کچھ کیا گیا تو ہم تیار ہیں۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ اس ہی لیے ہم نے واضح وارننگ کے ساتھ دن کی روشنی میں کارروائی کی، ہم اس راستے پر نہیں چلنا چاہتے اور چاہتے ہیں کہ بھارت امن کو موقع دے، بھارت بالغ جمہوریت کی طرح مسائل حل کرے۔

(358 بار دیکھا گیا)

تبصرے