Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
پیر 18 نومبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

دنیا کی آدھی آبادی کی دولت جتنی رقم کے مالک 26 افراد

قومی نیوز منگل 22 جنوری 2019
دنیا کی آدھی آبادی کی دولت جتنی رقم کے مالک 26 افراد

کراچی…دنیا کے امیر ترین 26افراد کی دولت دنیا کی نصف آبادی کے دولت کے مساوی ہے۔

امیروں کی دولت میں12فی صداضافہ، جبکہ غریبوں کی دولت میں11فی صد کمی ہوگئی۔ہر دو دن بعد ایک ارب پتی کا اضافہ دیکھا گیا۔

دنیا بھر کی مجموعی دولت317ٹریلین ڈالر ہے۔ گزشتہ برس امیروں کی دولت میں ڈھائی ارب ڈالر یومیہ اضافہ ہوا۔

بھارت کی ایک فیصد امیرترین آبادی کی دولت میں43ارب روپے سے زائد یومیہ اضافہ ہوا۔ 2030تک امیر ترین ایک فی صد آبادی کے پاس دنیا کی دو تہائی دولت ہوگی ،

2017کی رپورٹ کے مطابق ایک فی صد آبادی کے پاس دنیا کی نصف دولت ہے۔

آکسفام،ویلتھ ایکس ، جیسے تھنک ٹینکس کی رپورٹ کے مطابق2018میں امیروں کی دولت میں 12فی صد روزانہ کے حساب سے اضافہ ہوا جو کہ ڈھائی ارب ڈالر بنتے ہیں۔

مزید پڑھئیے‎ : کراچی کی ٹوٹی پھوٹی سڑ کیں‌مزید تباہ

یوں دنیا میں اس وقت2208ارب پتی ہیں، ایک عشرہ قبل معاشی بحران کے بعد سے امیرترین افراد کی تعداد دگنا ہو گئی جب کہ دنیا کی نصف غریب آبادی کی دولت میں گیارہ فی صد کمی ہوگئی۔

دنیا کے26افراد کے پاس ایک عشاریہ چار ٹریلین ڈالر ہے یہ دولت 3ارب80کروڑ افراد کی دولت کے مساوی ہے

2017میں43افراد کے پاس دولت دنیا کی نصف آبادی کی دولت کے مساوی تھی جب کہ2016میں61افراد کی دولت نصف آبادی کی دولت کے برابر تھی۔

یوں دنیا میں امیر ترین افراد کی دولت میں اضافہ ہوا۔ بلوم برگ کی رپورٹ کے مطابق دنیا کے پہلے دس امیر ترین افراد میں سے سات کا تعلق امریکا سے ہے،

جن میں سے چھ آئی ٹی کے کاروبار سے وابستہ ہیں۔Credit Suisse کے اعداد وشمار کے مطابق دنیا بھر کی مجموعی دولت317ٹریلین ڈالر ہے

دنیا کی مجموعی آبادی سات ارب بیس کروڑ سے زائد ہے اگر اس دولت کو مساوی تقسیم کردیا جائے تو دنیا کاہر شخص 44028ڈالر کا مالک ہوگا۔

گزشتہ برس بھارت کی ایک فی صد آبادی کی دولت میں یومیہ43ارب 31کروڑ روپے(2200کروڑ بھارتی روپے) کا اضافہ ہوا۔

(379 بار دیکھا گیا)

تبصرے