Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
جمعرات 09 جولائی 2020
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

پورٹ قاسم میں الوطن اسکیم کے انڈسڑیل پلانٹس منسوخ

صابرعلی جمعرات 17 جنوری 2019
پورٹ قاسم میں الوطن اسکیم کے انڈسڑیل پلانٹس منسوخ

کراچی … وزارت پورٹ اینڈشپنگ کے ادارے پورٹ قاسم اتھارٹی نے سابق دور حکومت میں سمندرپار پاکستانیوں کو سرمایہ کاری اور ملک میں صنعتیں لگانے کی غرض سے الوطن اسکیم کے نام سے انڈسٹریل پلاٹ دیئے گئے تھے

جس کی مد میں سمندر پار پاکستانیوں نے لاکھوں روپے پلاٹ کے حصول کے لیے پورٹ قاسم اتھارٹی کو جمع کرائے تھے‘ جس کے بعد سمندر پار پاکستانیوں کو الاٹ کردیئے گئے تھے

تاہم نواز شریف حکومت کے دور میں 2016 ء میں اس اسکیم کو کوئی معقول وجہ بتائے بغیر ختم کرنے کا فیصلہ کیاگیااور 2018 ء میں آنے والی پی ٹی آئی حکومت نے سابقہ نواز شریف حکومت کے اس فیصلے کو برقرار رکھتے ہوئے الوطن اسکیم کو ختم کرتے ہوئے الاٹیز کو ان کے جمع شدہ پیسے معمولی منافع سے واپس کرنا شروع کردیئے‘

مزید پڑھئیے‎ : کراچی ایئرپورٹ پرمنظم چور گروہ کے سرگرم ہونے کا انکشاف

ذرائع کے مطابق نوازشریف حکومت کے دور میں سابق وزیر اعظم کے پرنسپل سیکریٹری فواد حسن اور بیورو کریسی کے دیگر افسران کو پورٹ قاسم کی اس زمین پر نظر تھی اور وہ اس زمین کو ہتھیانے کے لیے الوطن اسکیم ختم کرنا چاہتے تھے‘ تاہم موجودہ حکومت جو سابقہ حکومت کے فیصلوں کے برخلاف لوگوں کو نیا پاکستان اور انصاف دینے آئی ہے‘ پرانے پاکستان کے اس فیصلے کو نئے پاکستان میں برقرار رکھ کر سمند ر پار پاکستانتوںکو ان پلاٹوں سے محروم کردیا گیاہے ‘

واضح رہے کہ پی ٹی آ ئی حکومت خصوصاًوزیر اعظم عمران خان سمند رپار پاکستانیوں کے کردار کو خصوصی اہمیت دیتے ہیںاور یہ کہا جاتاہے کہ سمندر پار پاکستانیوں کا بھیجا جانے والا زرمبادلہ ملک کی معیشت میں انتہائی اہمیت کاحامل ہے

ذرائع کے مطابق وزارت ساحلی امور خصوصاً پورٹ قاسم اتھارٹی کے بعض ان عناصر نے جوالوطن اسکیم کی زمین کو اپنے مفاد میں استعمال کرنا چاہتے ہیں

وفاقی وزیر ساحلی امور علی زیدی کو لاعلم رکھ کر یا صحیح صورتحال بتائے بغیر الوطن اسکیم کو ختم کرکے سمندر پار پاکستانیوں کے ان سینکڑوں الاٹیز کو مایوس کیا ہے ‘ جو اپنے وطن آکر ان صنعتی پلاٹوں پر کوئی صنعت قائم کرکے ملک کے اندر اپنے لیے روز گار کے مواقع حاصل کرنا چاہتے تھے۔

(301 بار دیکھا گیا)

تبصرے