Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
اتوار 15 دسمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

خطرناک قیدیوں سے ملنے والوں کا ریکارڈ چیک

قومی نیوز جمعه 04 جنوری 2019
خطرناک قیدیوں سے ملنے والوں کا ریکارڈ چیک

کراچی….قانون نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے ملیر جیل میں سرچ آپریشن کیا گیا،جس میں مختلف بیرکس کی تلاشی لی گئی تاہم کوئی کوئی ممنوعہ سامان برآمد نہیں ہوا۔

ذرائع کے مطابق ملیر جیل میں قانون نافذ کرنے والے اداروں نے سرچ آپریشن کیا اس دوران رینجرز کی بھاری نفری موجود تھی اور جیل میں کسی کو بھی داخل ہونے کی اجازت نہیں تھی۔

 آپریشن کے دوران خطرناک قیدیوں سے ملنے والوں کا ریکارڈ بھی چیک کیا گیا جب کہ قانون نافذ کرنے والے اداروں نے مختلف بیرکس کی تلاشی بھی لی۔

ذرائع نے بتایاکہ ملیر جیل میں آپریشن شہر قائد میں جاری دہشت گردی کی حالیہ کارروائیوں کے باعث کیا گیا۔ گزشتہ سال کے آخر میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے ایم کیو ایم پاکستان کے سابق رہنما علی رضا عابدی کو قتل کردیا تھا جب کہ اس سے قبل چینی قونصل خانے پر حملہ بھی کیا گیا تھا۔

دوسری جانب جیل حکام کے مطابق جیل میں سرچ آپریشن جیل حکام کی سفارش پر ہی کیا گیا۔ ملیر جیل میں1800 قیدیوں کی گنجائش ہے لیکن جیل میں کئی گنا زیادہ قیدی موجود ہیں جن کی تعداد5600 ہے۔

جیل حکام کے مطابق جیل میں گنجائش سے زیادہ قیدیوں کی موجودگی کی وجہ سے سرچ آپریشن کی سفارش کی گئی تھی جب کہ جیل کی اپنی نفری انتہائی کم ہے جس کے باعث رینجرز کی مدد لینی پڑی۔

سرچ آپریشن کے دوران کسی کو بھی جیل میں داخل ہونے یا باہر جانے کی اجازت نہیں تھی جب کہ آپریشن کے دوران رینجرز کی بھاری نفری موجود تھی۔

ملیر جیل میں آپریشن حالیہ دہشت گردی کے واقعات کی وجہ سے کیا گیا ہے جس کی کڑی جیل میں موجود قیدیوں سے مل رہی تھی۔جیل حکام کے مطابق ملیر جیل میں کافی عرصے سے سرچ آپریشن نہیں ہوا تھا اس لیے رینجرز کی مدد سے سرچ آپریشن کیا گیا ۔

(206 بار دیکھا گیا)

تبصرے