Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
بدھ 20 مارچ 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

بندوشاہ بوری میں بند ملا

ارشد انصاری جمعه 04 جنوری 2019
بندوشاہ بوری میں بند ملا

بظا ہرمحسوس ہو تاہے کہ مو جو دہ دو ر میں انسان کی جان کی کو ئی قیمت نہیں رہی ہے اور بڑے سفا کی کے ساتھ انسانی قتل میں رو ز بر و ز ا ضا فے سے ہر حلقہ احباب دا نشو ر ہو یا سیا ستد ان یا پھر سما جی شخصیا ت سمیت علمی و ا دبی تاجر ہو یا سیکو رٹی ادا رو ںکے اہلکار اور چاہے کوئی بھی مکتبہ فکر ہو یا پھر کو ئی بھی خا ند ان ہی سے کو ئی وا بستہ شخص ذ ی شعو ر انسان سو چنے پر مجبو رہے کہ نہ جانے قتل کیو ں ہو جا تے ہیں یا کر دیئے جاتے ہیںاور اب تو بو ری میں بند نعشو ں سے معاشرے میں بسنے والے افر اد میں یہ سو چ پید ا ہو رہی ہے کہ ان سفا ک قا تلو ںکی وا ردا تو ں سے جو واقعا ت ر پو ر ٹ ہو تے ہیں یا جو مشا عد ے میں آرہے ہیں سفا کی کے سا تھ قتل کی وا ردا تو ں میں خواہش خو د سر ی با اثر یت کمتر ی یا پھر دنیا وی لین دین اور نہ جانے کس طر ح کی حر کات کے با عث قتل وا ردات کرنے پر نہ جا نے انسانی کیو ں تیا ر ہو جاتاہے اور اسے معلوم ہے کہ جب اس کا قتل کرنے کا پر دہ چا ک ہو گا تو اے سز ا بھی ملے گی لیکن اپنی حرکات خو ا ہشا ت یا پھر کو ئی اور وجہ کے با عث وہ قتل کی وار دات میں ملو ث ہو کے ایک جیتے جا گتے انسان کا قتل کر دیا ہے اور ا پنے جرم کو چھپا نے اور سزا سے بچنے کے لیے قاتلو ں کی جانب سے آ ج کل جو عمل کیا جا رہاہے اس میں وہ نعش کو بو ری میں بند کرکے کسی سنسا ن خا لی جگہ اور پلا ٹ ودیگرمقام یا پھر و ہا ں جہا ں اسے قتل کر تے یا نعش پھینکتے ہوئے اسے کوئی دیکھ نہ سکے اسی مقا م پر وہ نعش بو ری میںبند کر کے پھینک کر فر ا ر ہو نے ہی کا میا بی سمجھتا ہے ‘ جبکہ اسے علم نہیں ہے کہ آنے والے وقت میں نا حق خون سامنے آ ئے گا اور اسے اس طر ح کے قتل کی سزا بھی دنیا و آخر ت میں ملے گی 19دسمبر کو حیدر آباد میں بھی ایک با رپھر ٹنڈویو سف تھا نے کی حد ود گلشن ر ئیس فیز2 کے علا قے سے ایک بوری بند ضعیف العمر نامعلوم شخص کی نعش ملنے کی اطلاع پر علا قے میں خوف و حر اس پھیل گیا اور پولیس کو ا طلا ع دی گئی پولیس نے ٹنڈو یو سف تھانے کی حدود گلشن رئیس فیز2 میںنہر کے کنا رے ایک 60سالہ نامعلوم شخص کی بوری بند سر بر ید ہ نعش کو ا پنی تحو یل میں لے کر سول اسپتال پہنچا یا جہا ں سول اسپتال کی انتظامیہ کی مد د سے نعش کو مر دہ خا نے میں شنا خت کے لیے ر کھو ادیا گیا تھا مقا می پولیس اور مختلف سیکو رٹی اداروں کے اہلکا روں کی جانب سے پولیس و دیگر حکام کو حیدر آ باد میں بوری بند ضعیف العمر شخص کی نعش کی بر آ مد گی کے حوالے سے اطلاعات دی گئی جس کے با عث ایس ایس پی حیدرآباد سر فراز نو ا ز شیخ دیگر پولیس افسران اور ما ہر پولیس کی ٹیمو ں ارکان کے ہمراہ گلشن رئیس فیز ٹو کے نعش کی بر آمد گی کے مقام پر پہنچے اور پو لیس کو قا تلو ں کی گر فتار ی کے احکا ما ت پولیس کو مو قع پر ہی دے دیئے پھر کیا تھا پولیس نے آ ئو دیکھا نہ تا ئو قر یبی مکینوں اور ا طلا ع دینے والے افر اد سے ابتد ائی معلومات اکٹھا کی تو معلوم ہو اکہ مذ کورہ شخص قر یبی علاقے کا ر ہا ئشی معلوم ہو تاہے پولیس نے پھر پھر تی دکھا ئی اور آ خر کا رنعش کے ملنے کے بعد سے کچھ ہی گھنٹو ں میں پتہ لگا لیا کے بو ری میں بند نعش ایک قریبی علا قے گجر اتی پا ڑے کے ر ہا ئشی شخص کی ہے جو کہ فقیر ہے اور بھیک مانگ کر اپنی زندگی گز ار ر ہا تھا نعش کی شنا خت مقتول کے ور ثاء کی جا نب سے بند و شاہ کے نا م سے کر لی گئی پولیس کے مطابق مقتو ل کی نعش ملنے پر ابتدائی معلو مات ا کٹھا کی گئی ہے مقتول فقیر تھا اور گھر یلو ں تناز عہ معلوم ہوتاہے جسے قتل کیا گیاہے سرپر ڈنڈ ے لگنے کے نشانات بھی ملے ہیں مقتول کے پو سٹ ما رٹم کرانے کے بعد ہی صو ر تحا ل قتل کی وا ضح ہو گی ‘جبکہ ور ثاء کا کہنا ہے کہ مقتول بند و شاہ ایک معمر شخص تھا اس کی کسی کے ساتھ ذا تی د شمنی نہیں تھی بہرحال پولیس کے ساتھ تحقیقات میں ان سے تعا و ن کر نے کے لیے تیار ہیں بند و شاہ کو جس بے دردی سے قتل کرکے اس کی نعش کو نہر کے قریب بو ری میں بند کرکے پھینکا گیا ہے اس کے قاتلوں کو گر فتار کیاجائے مقتول کے ور ثاء اور جبکہ علاقہ مکینو ں کا کہنا ہے کہ اس سے قبل بھی ایک بچی کی نعش بھی اس علاقے سے ملی ہے اور وہ بھی بوری بند نعش تھی ملز مان کوئی بھی ہو انہیں کیفر کر دار تک پہنچا یا جائے بند و شاہ نامی شخص کی خبر یں وا ٹس ایپ اور فیس بک پر وا ئرل ہو نے کے بعد پولیس نے تفتیش شرو ع کی تو پو لیس کو پتہ چلا کہ مقتول کے اپنی پڑ و سن نو را لنسا کے ساتھ جسما نی تعلقا ت تھے جس پر پو لیس نے مذکورہ خاتون اور اسکے بیٹے شاہ فیصل سے تفتیش شروع کی تو وہ پو لیس کے رو ایتی طر یقو ں سے سامنے نہ ٹھہر سکے مقتول ایک رو ز اپنی پڑ و سن خا تون کے گھر پر مو جو د تھا کہ اس دو ران خا تو ں کا بیٹا شاہ فیصل عرف سنی اچانک واپس گھر آ گیا تو گھر کا دروازہ بند دیکھ کر اس نے د ھکا ما ر کر دروازہ کھو لا اور مقتول و اپنی ما ں کو قابل ا عترا ض حا لت میں دیکھ کر پہلے بر ا بھلا کہا اور اس کے بعد گھر میں موجو د ڈنڈا مقتول کے سر پر ما را جس سے وہ ہلاک ہو گیا بعدازاں شاہ فیصل عر ف سنی اور اس کی ماں نے نعش کو بو ری میں بند کی اور شا ہ فیصل نے اپنے دوست اشرف کو بلا کر اسکی مو ٹر سائیکل پر بو ری بند نعش کو ر کھا اور اسے گلشن رئیس میں پھینک کر آ گئے پو لیس ترجمان کے مطابق پو یس نے آلہ قتل ڈا نڈا بھی تحو یل میں لے لیا ہے دو سری جانب پو لیس ذ رائع کے مطابق ملز م کا دو ست ا شر ف بھی پولیس کی تحو یل میں ہے اور پولیس نے اس کی گرفتاری ظا ہر نہیں کی ہے‘ پولیس ذرائع کے مطا بق پولیس کے ایک خصوصی ٹیم نے گلشن رئیس میںملنے والی نعش کی تفصیلات سمیت اس قتل کی وار دات سے قبل بھی ایک لڑ کی کی ملنے والی بوری بند نعش کی تفصیلات سے پو لیس حکام کو تحر یر ی ر پو ر ٹ پہنچا دی گئی ہے‘ذ رائع کے مطابق ٹنڈو یو سف تھانے کی پولیس کی نا قص کار کر د گی کی ر پو رٹ بھی بھیجو ا دی گئی ہے ٹنڈو یو سف تھانے کی حد ود میں کچھ ہی د نو ں کی جہا ں جر ائم کی وا ردا تو ںمیں ا ضا فہ ہو ا تھا تو قتل کی وار دا تیں بھی ہو رہی ہیں ایک ہی علا قے میں اس قتل کی وا ر دات سے قبل ہی ایک بچی کی نعش ملنے پر پولیس کے خا طر خو اہ علا قہ مکینو ں اور مقتول کے ور ثاء سمیت دیگر تفتیش ٹیم کی مد د سے کا میا بی حاصل کی تھی‘ جبکہ پو لیس انتظا میہ کا کہنا ہے کہ پہلے سے ز یا دہ پولیس متحر ک ہے اور چند ہی رو ز میں پولیس کے ہاتھ قا تلو ں تک پہنچ جا ئیں گے اور قاتلوں کو کیفر کردار تک پہنچایا جا سکے گا۔

(111 بار دیکھا گیا)

تبصرے