Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
جمعه 10 جولائی 2020
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

فواد چوہدری کو سندھ میں تبدیلی کے لیے ٹاسک مل گیا

صابرعلی اتوار 30 دسمبر 2018
فواد چوہدری کو سندھ میں تبدیلی کے لیے ٹاسک مل گیا

کراچی… پی ٹی آئی نے سندھ میں تبدیلی کے لیے وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری کو ٹاسک دے دیا‘ فواد چوہدری آج اتوار کے 2 روزہ دورے پر کراچی آئیںگے‘ جی ڈی اے ‘ ایم کیوایم (پاکستان) سمیت دیگر سیاسی رہنمائوں سے ملاقاتیں کریں گے‘ گورنر سندھ عمران اسماعیل سے بھی خصوصی ملاقات کریں گے ‘ ذرائع کے مطابق پی ٹی آئی نے پیپلز پارٹی خصوصاً حکومت سندھ کے ذمہ داروں کے خلاف کرپشن کے الزامات میں کی جانے والی تازہ کارروائیوں کا بھرپور فائدہ اٹھانے کا فیصلہ کرلیا‘ پی ٹی آئی سندھ میں ان ہائوس تبدیلی یاگورنر راج کے ذریعے پیپلزپارٹی کی حکومت کو اقتدار سے باہرکرنے کے لیے سرگرم رہے ‘ پی ٹی آئی کے رہنمائوں کا دعویٰ ہے کہ پیپلز پارٹی کے ارکان سندھ اسمبلی کی بڑی تعداد ان سے رابطے میں ہے‘ وفاقی وزیر پورٹ اینڈ شپنگ علی زیدی کا کہنا ہے کہ پیپلزپارٹی 16-15 ارکان سندھ اسمبلی ان سے رابطے سے بھی متعدد ارکان کا رابطہ ہے‘ دوسری جانب پیپلزپارٹی نے بھی پی ٹی آئی کی ا س حوالے سے جاری کوششوں کا بھرپور مقابلہ کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے‘ سیاسی تجزیہ کاروں کے مطابق پی ٹی آئی سندھ میں اپوزیشن کی تمام جماعتوں کی حمایت حاصل کرے ‘ پھر بھی پیپلز پارٹی کی حکومت کو ختم نہیں کرسکتی ‘ جبکہ پی ٹی آئی کو سندھ میں پیپلزپارٹی کے لوگوں کی حمایت حاصل کرنے کے لیے فارورڈ بلاک بنانا پڑے گا‘ اگر پیپلزپارٹی کا کوئی رکن اپنی پارٹی پالیسی سے ہٹ کر پی ٹی آئی کے عمل کی حمایت کرے گاتو اس کی اسمبلی کی رکنیت باقی نہیں رہے گی‘ اس لیے پیپلزپارٹی کا کوئی رکن براہ راست پی ٹی آئی کے اس عمل کی حمایت نہیں کرسکے گا ‘ پیپلزپارٹی کے رہنما سابق گورنر پنجاب لطیف کھوسہ کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی سندھ میں پیپلزپارٹی کے خلاف کارروائیاں کرکے مشرقی پاکستان جیسی صورتحال پیدا کرنا چاہتی ہے ‘ انہوںنے کہا کہ سندھ میں گورنر راج کانفاذ آسان نہیںہے ‘ ذرائع کے مطابق پی ٹی آئی کی سندھ میں پیپلزپارٹی اور حکومت سندھ کے خلاف کارروائیوں کے نتیجے میں سندھ میں آئینی بحران پیدا ہوسکتا ہے اور بڑے پیمانے پر سیاسی افراتفری پیدا ہوسکتی ہے‘ جس کا فائدہ غیر جمہوری قوتوں کو ہوسکتا ہے‘ پیپلزپارٹی کے رہنمائوں کا یہ بھی کہنا ہے کہ پی ٹی آئی ملک میں ون پارٹی سسٹم لانا چاہتے ہیں‘ دوسری جانب پی ٹی آئی کو سندھ میں تبدیلی کے لئے اپوزیشن کی تمام جماعتوں کی حمایت حاصل نہیں ہوسکی ہے‘ ایم ایم اے سے تعلق رکھنے والے رکن سندھ اسمبلی عبدالرشید کا کہنا ہے کہ ایم ایم اے پی ٹی آئی کی جانب سے ایسے کسی بھی غیر جمہوری عمل حمایت نہیں کرے گی‘ انہوںنے کہا کہ فارورڈ بلاک بنا کر حکومت گرانا یا بنانا سیاسی اخلاقی بدحالی کے مترادف ہے ۔

(483 بار دیکھا گیا)

تبصرے