Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
پیر 21 جنوری 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News | Best Urdu Website in World

1355 شہریوں نے سڑکوں پر دم توڑ دیا

ویب ڈیسک جمعه 28 دسمبر 2018
1355 شہریوں نے سڑکوں پر دم توڑ دیا

رواں سال میں ٹریفک قوانین میں تو سختی کی گئی ٹریفک پولیس نے 25 لاکھ کے چالان کرکے 62 کروڑ سے زائد جرمانے بھی کئے‘ لیکن یہ سب سختیاں موٹر سائیکل سواروں کے لیے تھی‘ قاتل ڈمپر ‘ ٹینکر سڑک پر ڈوراتے رہے‘ رواں سال مختلف حادثات میں 1355 افر اد جاں بحق ہوئے‘ تاہم ٹریفک پولیس کے اعداد وشمار کے مطابق ٹریفک حادثات میں 200 افر اد ہلا ک ہوئے‘ ٹریفک پولیس کی رپورٹ میں بتایا گیا کہ رواں برس شہر بھر میں ہونے والے ٹریفک حادثات میں 208 افراد جاں بحق اور 178 افراد زخمی ہوئے‘ جن میں سائوتھ زون میں 21 ‘ سٹی میں 6 ‘ایسٹ میں 34 ‘ ویسٹ میں49 ‘ سینٹرل میں 26‘کورنگی میں 20 ‘ ملیر ضلع میں 27 افراد جاں بحق ہوئے‘ ٹریفک پولیس نے رواں برس کے دوران شہر بھر میں قانون کی خلاف ورزی پر کی جانے والی کارروائیوں کی تفصیلات جاری کردیں‘ ٹریفک پولیس نے رواں برس 622 ملین روپے سے زائد کا جرمانہ عائد کرتے ہوئے 25 لاکھ سے زائد چالان کردیئے‘ گزشتہ برس جرمانے کی رقم 574 ملین روپے وصول کی گئی تھی‘ ٹریفک پولیس کی جانب سے ایک رپورٹ جاری کی گئی ہے ‘ جس میں بتایا گیا کہ رواں برس ٹریفک پولیس نے قوانین کی خلاف ورزی پر 2566516 افراد کا چالان کرتے ہوئے 62225 ملین روپے جرمانہ وصول کیا‘ جبکہ گزشتہ برس 2017 ء میں 2408560 افراد کا چالان کرتے ہوئے 574 ملین روپے جرمانہ وصول کیاگیاتھا۔رپورٹ میں مزید بتایا کہ ون وے کی خلاف ورزی پر 822126 چالان کیے‘ ہیلمٹ نہ ہونے پر 515145 بنا لائسنس ڈرائیونگ پر 70569 ‘ سگنل کی خلاف ورزی پر 32893 ‘ تیز رفتاری یا غلط ڈرائیونگ پر 19024 ‘ مسافر بسوں کی چھت پر سفر کرنے پر 8352 ‘ دوران ڈرائیونگ موبائل فون کے استعمال پر 13032 دھواںدینے والی گاڑیوں کے خلاف 1525 چالان کیے گئے۔ ماہ جنوری شہر میں ٹریفک حادثات و دیگر واقعات میں پولیس افسر ،خواتین و بچوں سمیت134افراد جاں بحق ہوئے۔فروری میں ٹریفک حادثات میں 74افراد جاں بحق ہوئے ، مارچ میں مختلف علاقوں میں ٹریفک حادثات و دیگر واقعات میں پولیس اہلکار ، خواتین ، بچوں اور رکن سندھ اسمبلی روہینہ قائمخانی کے جواں بیٹے سمیت 146افراد جاں بحق ہوئے جبکہ ایک قیدی اسپتال میں دوران علاج دم توڑ گیا تھا۔ماہ مارچ میں بھی 5نوزائیدہ بچوں کی لاشیں ملی، اپریل میں ٹریفک و دیگر حادثات واقعات میں سب انسپکٹر سمیت 127افراد جاں بحق ہوئے، مئی میں ٹریفک حادثات میں 88 افراد ہلاک ،15افراد کی نعشیں ‘خواتین سمیت15افراد نے خودکشیاں کی جبکہ دیگر حادثات و واقعات میں 61افراد ہلاک ہوئے۔جون میں شہر کے مختلف علاقوں میں ٹریفک حادثات و یگر واقعات میں پولیس اہلکار ، خواتین اور بچوں سمیت 153افراد ہلاک ہوئے۔ماہ جولائی میں ٹریفک حادثات میں پولیس اہلکار اورالیکشن 2018کے تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار سمیت 54افراد جاں بحق ہوئے ۔ اگست میں ٹریفک حادثات و دیگر واقعات میں مجموعی طورپر پولیس و رینجرز اہلکار‘ خواتین اور بچوں سمیت 149افراد جاں بحق ہوئے‘ ستمبر کو ٹریفک حادثات ودیگر واقعات میں پولیس اہلکار ، خواتین اور بچوں سمیت 133افراد جان سے ہاتھ دھوبیٹھے۔اکتوبرمیںٹریفک حادثات و دیگر واقعات میں خواتین ، بچوں اور پولیس افسر سمیت154افراد جاں بحق ہوئے ۔نومبر میں شہر قائد میں ٹریفک حادثات میں پولیس اہلکار ‘ خواتین اور بچوں سمیت 78افراد جاں بحق ہوئے ، شہر کے مختلف مقامات سے خواتین سمیت 14افراد کی نعشیں ملیں‘ٹرین کی زد میں آکر 4افراد لقمہ اجل بنے ، جھلس کر فیکٹری کے 6ملازمین اور ایک خاتون سمیت9افراد جاں بحق ہوئے۔

(61 بار دیکھا گیا)

تبصرے