Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
بدھ 18  ستمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

زرداری نے تحفے میں ملنے والی 3گاڑیاں اپنے نام کرالیں

ویب ڈیسک بدھ 26 دسمبر 2018
زرداری نے تحفے میں ملنے والی 3گاڑیاں اپنے نام کرالیں

اسلام آباد۔۔۔۔ جعلی اکائونٹس اور منی لانڈرنگ کیس میں مشترکہ تحقیقاتی ٹیم نے سابق صدر آصف علی زرداری کے بیرون ملک اثاثوں کا بھی کھوج لگا لیا،صرف امریکہ نہیں بلکہ دبئی میں بھی جائیدادیں سامنے آگئیں۔مشترکہ تحقیقاتی ٹیم نے سابق صدر کو نیویارک مین ہٹن میں رہائشی اپارٹمنٹ اور دبئی میں پنٹ ہائوس کا مالک قرار دے دیا۔ نیویارک میں رہائشی اپارٹمنٹ جون 2007ء کو پانچ لاکھ تیس ہزار ڈالرز میں خریدا گیا۔رپورٹ میں پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین کے دبئی میں پینٹ ہائوس کی مالیت ایک کروڑ 19 لاکھ، 60 ہزار درہم بتائی گئی۔ یہ رقم عبد الغنی نے 2014ء کی ویلتھ اسٹیٹمنٹ میں تحفے میں دینا ظاہر کی۔سپریم کورٹ کے نوٹس لینے کے بعد زرداری نے 2018ء میں دبئی کی جائیداد کو انتخابی کاغذات میں ظاہر کیا اور بتایا وہ یہ جائیداد اپنی بیٹی کو 2016ء میں تحفہ کر چکے۔ 2010ء جون میں بطور صدر بھی آصف زرداری نے جعلی بینک اکائونٹس کا سہارا لیا۔فرنٹ مین عبدالغنی انصاری کے ذریعے چین سے 3کروڑ 74 لاکھ مالیت کی دو بلٹ پروف گاڑیوں کی خریداری اور کسٹم ڈیوٹی کیلئے مرحوم شخص کا اکائونٹ استعمال کیا گیا۔دریں اثناء آصف علی زرداری نے بطور صدر مملکت 5 بیش قیمت گاڑیوں کی درآمد میں سنگین بے قاعدگیوں اور بدعنوانی کامظاہرہ کرتے ہوئے ان کے ٹیکس اور ڈیوٹی کی ادائیگی جعلی اکائونٹس سے کی جبکہ دو بلٹ پروف گاڑیوں کواپنی ویلتھ سٹیٹمنٹ اور کاغذات نامزدگی میں پوشیدہ رکھا ، سابق صدر آصف علی زرداری کی جانب سے منگوائی گئی 3 گاڑیوں کیلئے ٹیکس اور ڈیوٹی کی ادائیگی ایم/ایس لکی انٹرنیشنل کے نام سے جعلی کاروباری کمپنی جو عدنان جاوید کے نام سے رجسٹرڈ تھی کے جعلی اکائونٹس سے کی گئی۔ عدنان جاوید ایک کمپیوٹر ہارڈ ویئر ٹیکنیشن تھا جس کے جعلی اکائونٹ سے 3کروڑ 71لاکھ روپے کی ا دائیگی کی گئی۔ یہ رقم 2014ء میں کلکٹر آف کسٹم کے نام پر جاری کی گئی ، تحقیقات کے دوران یہ بات بھی سامنے آئی۔جعلی اکائونٹ میں تحقیقات سے معلوم ہوا کہ یہ تین گاڑیاں جن میں دو یو اے ای سفارتخانے اور ایک لیبیا کے سفارتخانے کی جانب سے سابق صدر کو بطور تحفہ دی گئی تھیں جوبعد ازاں انہی کے نام پر رجسٹرڈ ہوئیں جن کا تذکرہ انہوں نے اپنے ویلتھ اسٹیٹمنٹ اور قومی اسمبلی کے الیکشن کے لئے جمع کرائے گئے کاغذات نامزدگی میں بھی کیا۔

(267 بار دیکھا گیا)

تبصرے