Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
پیر 18 نومبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

علی رضا عابدی کے قتل سےملک بھر کی سیاست میں ہلچل

صابرعلی بدھ 26 دسمبر 2018
علی رضا عابدی کے قتل سےملک بھر کی سیاست میں ہلچل

کراچی….سابق رکن قومی اسمبلی علی رضا عابدی کے قتل نے کراچی سمیت پورے ملک کی سیاست میں ہلچل مچادی، سیاسی حلقوں نے علی رضا عابدی کے قتل کو کراچی کا امن خراب کرنے کی سازش قرار دے دیا‘ علی رضا عابدی 25 جولائی کے عام انتخابات میں گلشن اقبال کے علاقے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 243 سے ایم کیوایم (پاکستان) کے امیدوار تھے‘ 2013 ء کے عام انتخابات میں اسی حلقے سے کامیابی حاصل کرنے والے علی رضا عابدی 2018 ء کے عام انتخابات میں پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان سے شکست کھاگئے تھے‘ جس پر سیاسی حلقوں سمیت خود ایم کیوایم (پاکستان) میں تحفظات پائے جاتے تھے اور یہ کہا جارہا تھا کہ کراچی کی دیگر نشستوں کی طرح مذکورہ نشست بھی پی ٹی آئی کو دلوائی گئی ہے‘ علی رضا عابدی بھی اس نشست پر اپنی شکست سے افسردہ تھے‘ تاہم ایم کیو ایم (پاکستان) نے فاروق ستار اور علی رضا عابدی سمیت کراچی میں بڑے پیمانے پر اپنی نشستیں کھودینے کے باوجود اس پر احتجاج کرنے سے بجائے پی ٹی آئی حکومت بنانے میں پی ٹی آئی کا ساتھ دیا اور پی ٹی آئی کے حکومت میں حصہ دار بن گئی‘ بعد ازاں ضمنی الیکشن میں بھی علی رضا عابدی اس نشست پر دوبارہ الیکشن لڑنا چاہتے تھے‘ تاہم ایم کیوایم (پاکستان) نے علی رضا عابدی کو ٹکٹ دینے سے انکار کرکے عامر چشتی کو ٹکٹ دیا جو 25 جولائی کے عام انتخابات میں ضلع وسطی کی نشست پر شکست کھاچکے تھے اور ضمنی الیکشن میں بھی انہوںنے علی رضا عابدی سے بھی بہت کم ووٹ حاصل کئے ‘ علی رضا نے ٹکٹ نہ دیئے جانے پر ایم کیوایم (پاکستان) کی بنیادی رکنیت سے استعفیٰ دے دیا تھا اور وہ آخری وقت تک ڈاکٹر فاروق ستار کے ساتھ تھے‘ بتایا جاتاہے کہ 25 جولائی کے عام انتخابات سے چند روز قبل ڈاکٹر فاروق ستار کو بہادر آباد جانے اور ایم کیوایم (پاکستان) کے ٹکٹ پر الیکشن میں حصہ لینے کے لیے بھی علی رضا عابدی نے فاروق ستار کو قائل کیاتھا ‘ علی رضا عابدی ضمنی الیکشن میں ایم کیوایم (پاکستان) کی جانب سے ٹکٹ نہ دیئے جانے پر بہت مایوس اور دل گرفتہ تھے اور اسی بنیاد پر انہوںنے بہادرآباد کے عارضی مرکز سے ناطہ توڑ لیاتھا‘ علی رضا عابدی کے سفاکانہ قتل پر صدر عارف علوی وزیر اعظم عمران خان سمیت ملک کی تمام سیاسی ‘ مذہبی اور سماجی شخصیات نے اظہار محبت کیا ہے ‘ واضح رہے کہ علی رضا عابدی کے والد اخلاق حسین عابدی بھی ڈیفنس کے علاقے سے ایم کیوایم کے ٹکٹ پر رکن قومی اسمبلی رہ چکے ہیں‘ جبکہ اخلاق حسین عابدی کے بھائی حامد حسین عابدی سندھ میں مشیر اطلاعات رہ چکے ہیں۔

(284 بار دیکھا گیا)

تبصرے