Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
هفته 07 دسمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

زرداری اور فریال تالپور کو مزید مہلت

رائو عمران جمعه 21 دسمبر 2018
زرداری اور فریال تالپور کو مزید مہلت

کراچی ۔۔۔۔ پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری اور فریال تالپور کی ممکنہ گرفتاری کے خدشے کے باعث پیپلز پارٹی کے سینکڑوں کارکن بینکنگ کورٹ پہنچ گئے‘ پولیس نے ممکنہ ہنگامہ آرائی کے خدشے کے باعث عدالت کے اطراف سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے تھے۔ عدالت نے آصف زرداری اور فریال تالپور کی گرفتاری میں 7 جنوری تک توسیع کردی۔اطلاعات کے مطابق پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری اور ان کی بہن فریال تالپور کی کرپشن کیس میں ممکنہ گرفتاری کے خدشے کے باعث پیپلز پارٹی کے رہنمائوں نے عدالت کے باہر پاور شو کرنے کے لئے اراکین پارلیمنٹ اور کارکنوں کوبینکنگ کورٹ پہنچنے کی ہدایت کی تھی۔ پولیس نے کسی بھی گڑبڑ سے نمٹنے کے لئے بینکنگ کورٹ جانے والے راستوں کو گاڑیوں کی آمدورفت کے لئے بند کردیا‘ سیکورٹی کے غیر معمولی انتظامات کئے گئے تھے۔ پولیس نے جیل کی قیدیوں والی گاڑیاں‘ پانی کی توپ اور آنسو گیس کے شیل‘ ربڑ کی گولیوں سے لیس اہلکاروں کو تعینات کیا تھا۔ لیڈی پولیس کی اضافی نفری بھی تعینات کی تھی‘ کارکنوں نے صبح سے ہی عدالت کے باہر ڈیرے ڈال لئے تھے۔ ایک زرداری سب پر بھاری‘ وزیراعظم بلاول‘ جئے بھٹو کے نعرے لگارہے تھے۔ عدالت میں پیشی کے موقع پر آصف زرداری کی لیگل ٹیم کے انچارج ایاز نائیک ایڈووکیٹ نے میڈیا کو بتایا کہ سپریم کورٹ نے فاضل عدالت کو آرڈر کیا ہوا ہے کہ وہ اس کیس میں کوئی آرڈیننس کرسکتی نہ کیس سپریم کورٹ میں زیر سماعت ہے۔ 24 دسمبر کو سپریم کورٹ میں سماعت ہوگی۔ اس کیس کی جے آئی ٹی 20 دسمبر کو سپریم کورٹ میں پیش کردی گئی تھی۔ جبکہ میگا سٹی لانڈرنگ کیس میں پیشی کے لئے آج صبح آصف علی زرداری اور فریال تالپور کی بینکنگ کورٹ میں حاضری‘ جیالوں کی دھکم پیل‘ نعرے بازی‘ کمرہ عدالت کے اندر نعروں کی آوازیں گونجتی رہیں۔ جیالے کمرہ عدالت میں کرسیوں پر چڑھ گئے‘ عدالتی عملہ پریشان‘ تاہم سماعت کے دوران ان کی ضمانت میں 7 جنوری تک توسیع کردی گئی۔ عدالت میں پیشی کے دوران آصف زرداری‘ فریال تالپور‘ نمرمجید و دیگر نے حاضری لگائی۔ عملہ بار بار غیرمتعلقہ افراد کو باہر جانے کی ہدایت کرتا رہا،مگر جیالے ٹس سے مس نہ ہوئے۔ سماعت کے دوران ضمانت میں توسیع کے بعد بھی عدالتی کارروائی کی تکمیل کے بعد کافی دیر تک جیالے کمرہ عدالت میں موجود رہے اور نعرے بازی کی جاتی رہی۔ سماعت کے دوران مختصر دلائل کے بعد ضمانت میں توسیع کے بعد سماعت میں بھی 7 جنوری تک توسیع کردی گئی۔ عدالتی استفسار پر ایف آئی اے پراسیکیوٹر نے بتایا کہ جے آئی ٹی رپورٹ جمع کرادی گئی ہے۔

(274 بار دیکھا گیا)

تبصرے