Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
بدھ 13 نومبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

آئی جی سندھ کلیم امام کو عہدے سے ہٹانے کا فیصلہ

قومی نیوز اتوار 16 دسمبر 2018
آئی جی سندھ کلیم امام کو عہدے سے ہٹانے کا فیصلہ

کراچی۔۔۔آئی جی سندھ کلیم امام کو عہدے سے ہٹانے کا فیصلہ امیر شیخ اور غلام نبی میمن کے نام نئے آئی جی سندھ کے لیئے زیر غور سندھ میں جب نئے آئی جی کی تعیناتی ہوئی تو یہ بات سب کی زبان پر تھی کہ کلیم امام کو سندھ میں آئی جی لگوانے والا کوئی اور نہیں بلکہ ملک کی طاقتور کاروباری شخصیت ملک ریاض ہے ملک ریاض سے کلیم امام کی قربت کچھ سال قبل ہوئی جب وہ آئی جی اسلام آباد تھے اے ڈی خواجہ کے عہدے سے ہٹنے کے بعد ملک ریاض نے آصف زرداری سے دو اہم ملاقاتیں کرنے کے بعد کلیم امام کو سندھ میں بطور آئی جی لگوانے کا گرین سگنل لے لیا کلیم امام پپلز پارٹی کی حکومت میں تعینات ہونے والے واحد آئی جی ہیں جنہیں پوسٹنگ سے آصف زرادری فریال ٹالپر سمیت کسی بھی اہم پارٹی رہنما کو انٹرویو دینے کی بھی ضرورت پیش نہ آئی کیوں کہ انکی “ضمانت” ملک ریاض پہلے ہی لے چکے تھے کچھ روز قبل جب بحریہ ٹاؤن ملازمین اور ڈفینس کلفٹن کے سیکڑوں اسٹیٹ ایجنٹس نے احتجاج کیا تو آئی جی سندھ کے حکم پر نہ صرف ان کو گرفتار کیا گیا بلکہ ان پر مقدمات بھی قائم کیئے گئے آئی جی سندھ کے اس عمل پر ملک ریاض نہ صرف برہم ہوئے بلکہ آصف زرداری سے ایک ہفتے میں دو “اہم” ملاقاتیں بھی کیں آصف زرداری نے اپنی “یاروں کا یار” والی شہرت کو تقویت دیتے ہوئے وزیر اعلیٰ سندھ کو کلیم امام کی خدمات وفاق کے سپرد کرنے کا عندیہ دے دیا ہے سندھ میں نئے آئی جی کے لیئے امیر شیخ اور غلام نبی میمن کے نام سرفہرست چل رہے ہیں تاہم کسی تیسرے افسر کی لاٹری بھی نکل سکتی ہے ادھر آئی جی سندھ کلیم امام نے بھی رضاکارانہ طور پر عہدہ چھوڑنے اور اپنی فرائض یو این مشن پر ادا کرنے کی حامی بھرلی ہے۔

(449 بار دیکھا گیا)

تبصرے