Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
هفته 11 جولائی 2020
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

طالبہ کی ویڈیو بنانے والےپولیس اہلکارکی دھلائی

قومی نیوز جمعرات 13 دسمبر 2018
طالبہ کی ویڈیو بنانے والےپولیس اہلکارکی دھلائی

کراچی ۔۔۔سخی حسن چورنگی پر کالج سے واپس جانے والی طالبہ کی موبائل فون سے ویڈیو بنانے والے پولیس اہلکار کو لڑکیوں نے پکڑ کر تشدد کا نشانہ بنا ڈالا ،واقعے کی اطلاع پر لڑکیوں کے والدین،پولیس حکام رینجرز اور شہریوں کی بڑی تعداد جمع ہو گئی ،وڈیو بنانے والا اہلکار موبائل میں بیٹھ کر فرار ہو گیا، آئی جی سندھ نے واقعہ کا نوٹس لے لیا، تفصیلات کے مطابق شارع نورجہاں کے علاقے نارتھ ناظم آباد میں واقع سرکاری گرلز کالج سے ایڈمٹ کارڈ لے کر واپس طالبات گھر جارہی تھیں کہ سخی حسن چورنگی کے قریب کھڑی ایک پولیس موبائل میں سوار پولیس اہلکار نے ایک طالبہ کی اپنے موبائل فون سے ویڈیو بنانا شروع کردی جس پر طالبہ اور اس کے ساتھ موجود دیگر طالبات مشتعل ہو گئیں اور اہلکار کو پکڑ کر تشدد کا نشانہ بنانا شروع کردیا ،واقعے کو دیکھ کر شہریوں کی بڑی تعداد بھی موقع پر جمع ہو گئی جس پر تشدد کا نشانہ بننے والا اہلکار اپنے ساتھی اہلکاروں کے ہمراہ موبائل میں بیٹھ کر موقع سے فرار ہو گیا ،جبکہ واقعے کی اطلاع پر طالبات کے والدین ،پولیس احکام اور رینجرز بھی موقع پر پہنچ گئی ،ایس ایچ او رائو ظہیر نے بتایا کہ واقعے کی درخواست وصول کرلی ہے اور تھانے میں تعینات تمام اہلکاروں کی شناخت پریڈ بھی کروائی ہے تاہم ملزم اہلکار کی شناخت نہیں ہو سکی ہے جس کے بعد دیگر ذرائع سے موبائل اور اہلکار کو تلاش کرنے کی کوشش شروع کردی ہے ، واقعہ غلط فہمی کے باعث پیش آیا تھا اور جلد ہی ملوث اہلکار کو تلاش کر کے قانونی کارروائی کی جائے گی، آئی جی سندھ سید کلیم امام نے شاہراہ نورجہاں تھانہ کی حدود میں پولیس موبائل پر موجود اہلکار کا کالج طالبات کی مبینہ ویڈیو بنانے اور نازیبا حرکات کے حوالے سے میڈیا رپورٹس پر آئی جی سندھ ڈاکٹرسید کلیم امام نے انتہائی سخت نوٹس لیا ہے-

(706 بار دیکھا گیا)

تبصرے