Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
بدھ 20 مارچ 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

مودی کی سیاست فیل ، تین اہم ریاستوں میں نتیجہ تیل

ویب ڈیسک منگل 11 دسمبر 2018
مودی کی سیاست فیل ، تین اہم ریاستوں میں نتیجہ تیل

نئی دہلی ۔۔۔بھارت میں چھتیس گڑھ ،راجھستان مدھیہ پردیش ،تلنگانہ اور میزو رام میں ریاستی انتخابات کے نتائج آنا شروع ،مودی کی سیاست فیل ، تین اہم ریاستوں میں نتیجہ تیل ،بھارتی وزیر اعظم کو لگے انتخابی ہچکولے، جہاں نام گونجتا تھا ،وہاں بھی ان کی جماعت کا بینڈ بج گیا ،چھتیس گڑھ اور راجھستان میں بازی مخالف کانگریس کے ہاتھ،مدھیہ پردیش میں بھی قسمت نے نہ دیا ساتھ ،کارکردگی دکھانے کے بجائے انتہا پسندی کی بیساکھی لگا کر سیاست کرنے ، اقلیتوں کی جانوں سے کھیلنے کا نتیجہ بھارتی وزیر اعظم کے سامنے آگیا ۔بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق ابتدا ء میں تو چھتیس گڑھ اور راجھستان کی طرح مدھیہ پردیش بھی کانگریس کی چھولی میں گرتا نظر آیا مگر پھر مودی کی جماعت نے ’کم بیک‘کیا۔ البتہ چھتیس گڑھ اور راجھستان میں تادم تحریر نتائج آنے تک بی جے پی ’بیک فٹ‘ پر ہی تھی۔تاہم ان نتائج سے کانگریس کے مردہ گھوڑے میں جان سی پڑگئی ہے۔مذکورہ تین ریاستوں میں مودی کے پیروں سے زمین نکلنے کو بعض بھارتی مبصرین زوال کا آغاز قرار دے رہے ہیں، بھارتی اور غیرملکی ذرائع ابلاغ کے تجزیوں میں کہا جارہا ہے کہ سیاست میں کچھ بھی ممکن ہے لیکن مودی نے اپنی سیاسی وقعت کھودی ہے۔انہوں نے ملازمتیں دینے اور کسانوں کے مصائب پاٹنے کے 2014 کی طرح ہندو انتہا پسندی کی بیساکھی لگانے کی جو کوشش کی، اس کا مذکورہ تینوں ریاستوں کے انتخابات پر تو کوئی حق میں اثر نہیں آیا ہے۔علاوہ ازیں تلنگانہ اور میزورام سے بھی ریاستی انتخابات کے نتائج جاری ہونا شروع ہوگئے ہیں جہاں تلنگانہ راشٹرا اور میزو نیشنل فرنٹ جیسی علاقائی پارٹیاں بھاری مارجن کے ساتھ رنگ جمانے میں کامیاب رہی ہیں۔اگر پھر سے چھتیس گڑھ کی بات کریں تو یہاں 15 برس سے مودی کی جماعت برسر اقتدار تھی مگر کانگریس جیت گئی،جو مودی کے لئے بھارتی عوام کا ان کی پالیسیوں پر عدم اعتماد کا اعلان ہے۔مودی بیروزگاری کے جن کو بوتل میں بند نہ کرسکے،ترقیاتی منصوبوں کو مہمیز نہ دے سکے اور نہ ہی ان کے دور میں کسانوں نے اپنی جانیں اپنے ہاتھ سے لینے کا وطیرہ ترک کیا ہے۔

(198 بار دیکھا گیا)

تبصرے