Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
اتوار 20 جنوری 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News ! Best Urdu Website in World

سینئرز کی کرتی ہوں قدر صائمہ اظہر

عاصم رحمانی اتوار 02 دسمبر 2018
سینئرز کی کرتی ہوں قدر  صائمہ اظہر

معروف ماڈل و اداکارہ صائمہ اظہر نے کہا ہے کہ ہم دنیا بھر میں فیشن انڈسٹری پر راج کررہے ہیں جس طرح ہمارے فیشن ڈیزائنرز دیپک پروانی،علی ذیشان ، آمنہ احمر ، کوکی، عاصمہ ، ذیشان بری والا، فوزیہ حمید اوردیگر کو پذیرائی ملی ہے اس کا تصور پاکستان میں رہنے والے لوگ نہیں کرسکتے۔ پاکستانی ماڈلز کا شمار اب بین الاقوامی سطح پر ہورہا ہے اور فیشن انڈسٹری ملک میں زرمبادلہ کمانے کاذریعہ بن رہی ہے۔اپنے ایک انٹرویو میں اداکارہ نے کہا کہ ٹی وی سیریل میں کام کرنے کا تجربہ خوشگوار رہا ، مزید آفر ز تھیں جنہیں فیشن شوزکی مصروفیات کے باعث قبول نہیں کرسکی۔ اب ٹی وی ڈراموں اور فلموں میں کام کرنے کے لئے شیڈول ترتیب دے رہی ہوں۔ صائمہ اظہر نے کہا کہ میں نے ماڈلنگ سے فلم تک بڑی جدوجہد اور محنت سے طویل سفر طے کیا اور موجودہ مقام تک پہنچی ہوں۔ اداکارہ نے کہا کہ پاکستانی فیشن انڈسٹری سے تعلق میرا فخر ہے، فیشن کے بدلتے رجحانات نے پوری دنیا کواپنا گرویدہ بنا رکھا ہے۔صائمہ اظہر نے کہا آئے روزنت نئے انداز متعارف کروائے جاتے ہیں اوریہ اسٹائل بن کرراتوں رات پوری دنیا میں پھیل جاتے ہیں۔ مذہبی اورقومی تہواروں کے ساتھ بدلتے موسموں کی مناسبت سے خوبصورت رنگوں میں تیارکردہ ملبوسات تمام عمر کے لوگوں کی اولین ترجیح بن جاتے ہیں۔دیکھا جائے تواس وقت فیشن انڈسٹری کے رنگ ہمیں فلموں، ٹی وی ڈراموں ، میوزک پروگراموں سمیت دیگرمیں نمایاں دکھائی دیتے ہیں۔ یہ فیشن انڈسٹری ہی ہے جس نے لوگوں کواپنے اہم تہواروں کو یادگار بنانے کیلئے منفرد رنگوں میں بنے ملبوسات کے انتخاب کی پہچان دی ہے۔ اگراسی طرح فیشن کے رنگ فلموں میں نمایاں کیے جائیں توپاکستانی ثقافت کوپوری دنیاتک متعارف کروایا جاسکتا ہے۔ صائمہ اظہرنے کہا کہ مجھے فخر ہے کہ میرا تعلق پاکستان فیشن انڈسٹری سے ہے‘اس وقت پاکستانی فیشن انڈسٹری کی شہرت کے چرچے دنیا کے ان ممالک میں بھی ہورہے ہیں جن کوفیشن کاگھر کہا جاتا ہے۔ فرانس اوراٹلی کے ساتھ ہمارے پڑوسی ملک بھارت میں بھی پاکستانی فیشن انڈسٹری کی شہرت ہے۔ ہمارے ڈیزائنرزمتعدد بار دنیا کے بیشترممالک میں ہونیوالے فیشن ویک میں حصہ لے چکے ہیں اوروہاں پرانھیں بہترین رسپانس ملا ہے۔ جہاں تک بات بطورماڈل میری ہے تومیں نے ہمیشہ کوشش کی ہے کہ بہترین کام کروں۔ ریمپ پرکیٹ واک ہویا فوٹوشوٹس، میں نے اپنی فنکارانہ صلاحیتوں کااظہارکیا ہے اوریہی وجہ ہے کہ مجھے لوگ پسند کرتے ہیں۔ لیکن اب میں نے باقاعدہ ایکٹنگ کے شعبے میں قدم رکھ دیا ہے۔ بطورفلمی اداکارہ میں دیکھتی ہوں کہ ابھی تک ہمارے ہاں بننے والی فلموں میں ملبوسات پرکچھ خاص توجہ نہیں دی جاتی۔ اس لیے ضروری ہے کہ فیشن ڈیزائنر کوفلم کا حصہ بنایا جائے تاکہ فلموں کے معیارمیں بہتری آسکے۔ اس سے ایک طرف تولوگ کوکچھ نیا دیکھنے کوملے گا اوران کی فیشن کے حوالے سے سوچ بھی بدلے گی۔

(57 بار دیکھا گیا)

تبصرے