Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
منگل 11 دسمبر 2018
LZ_SITE_TITLE
 
No one covers Karachi like we do!

شاباش سوہائی

راﺅ عمران اشفاق جمعه 30 نومبر 2018
شاباش سوہائی

کلفٹن میں چینی قونصلیٹ پر کالعدم تنظیم کے حملے کو ناکام بنانے کے بعد ایس پی کلفٹن سوہائے عزیز تالپر کی مقبولیت کے چرچے منظر عام پر آئے‘ سوہائی عزیز کی بہادری سوشل میڈیا پر ٹا پ ٹرینڈ بن گئی ‘ وزیر اعلیٰ سندھ اور آئی جی سندھ کلیم امام نے ایس پی کلفٹن کو شاباش دی اور قائد اعظم پولیس میڈل دینے کی سفارش کی‘ سوشل میڈیا پر چرچے بعض افراد کو ناگوار گزرا‘ خاتون پولیس افسر کے کارنامے کو منفی انداز میں پیش کرنے لگے‘ سوہائی عزیز نے خاتون ہونے کے باوجود ان منفی خبروں کا جواب مثبت انداز میں دیا‘ سوہائی عزیز سے میری پہلی ملاقات کراچی چیف پولیس ڈاکٹر امیر شیخ کے کیمپ آفس میں ہوئی تھی‘ اس ملاقات میں ہی ڈاکٹر امیر شیخ نے بتایا کہ سوہائی عزیز کو کراچی پولیس کا ترجمان مقرر کیاہے ‘ کمیشن کا امتحان دینے کے بعد سوہائی عزیز کو پولیس فورس جوائن ِکئے 5 سال کا عرصہ ہوا ہے ‘ لیکن فرض سے محبت اور لگن کے جذبے نے سوہائی عزیز کو شہرت کی بلندیوں پر پہنچادیاتھا‘ جس طرح سوہائی عزیز نے سی ایس ایس کا امتحان پاس کیاہے‘ تعلیم کے حصول کے لیے اس نے جو محنت کی ہے ‘ اس پر سوہائی عزیز کو سلام پیش کرنا چاہیے‘ سوہائی عزیز کا تعلق کسی وڈیرے یا جاگیردار کے گھرانے سے نہیں ہے‘ بلکہ حیدرآباد کے قریب ٹنڈو محمد خان کے گائوں بھائی جان تالپور کے متوسط گھرانے سے تعلق ہے‘ اس کے والد رسول بخش پلیجو کی عوامی تحریک کے کارکن اور مصنف ہیں‘ ان کے گائوں اور خاندان کے لوگ لڑکیوں کو اعلیٰ تعلیم دلوانے کے خلاف تھے اور ان کا کہنا تھا کہ لڑکیوں کو مذہبی تعلیم دلوائی جائے ‘ سوہائی عزیز نے اپنا گائوں چھوڑ کر حیدرآباد آکر تعلیم کا سلسلہ جاری رکھا‘ ابتداء میں وہ چارٹرڈ اکائونٹنٹ بننا چاہتی تھی‘ لیکن ملک کے لیے کچھ کرنے کا جذبہ رکھتی تھی‘ اس لیے سی ایس ایس کے بعد اس نے پولیس سروس جوائن کی‘ سوہائی عزیز نے ٹریننگ کے بعد پہلی تعیناتی حیدرآبادمیں ہوئی ’ حیدرآباد میں سماج دشمن عناصر کے خلاف مہم میں بھر پور کارروائی دکھائی۔سندھ یونیورسٹی میں ساڑھے 6 کلو وزنی بم ملا‘ اس وقت سوہائی عزیز کو وزن اٹھانے سے ڈاکٹروں نے منع کیاتھا‘ سوہائی عزیز نے از خود بم کو اٹھا کر عوامی مقام سے دور کیا‘ کلفٹن میں تعیناتی کے بعد ڈیفنس ‘ کلفٹن میں ڈرٹی پارٹی کے چرچے تھے‘ سوہائی عزیز نے اس پارٹی کے آرگنائزر کو گرفتار کیا‘ تعلیمی اداروں میں منشیات کے خاتمے کے لیے خصوصی ٹیم چلائی ‘ ڈیفنس‘ کلفٹن کو گداگر فری ایریا بنایا‘ چینی قونصلیٹ پر حملے کے بعد سوہائی عزیز نے میڈیا کو اپنے انٹرویو میں بتایا کہ جس وقت وہ موقع پر پہنچی چینی قونصلیٹ کے گیٹ پر متعین پولیس اہلکار دہشت گردوں سے مقابلہ کررہے تھے‘ اصل ہیرو تو فورس کے وہ جوان تھے ۔ جنہوںنے حملہ ناکام بنانے کے لیے اپنی جانوں کا نذرانہ دیا‘ انہوںنے کہا کہ کسی فرد واحد کا کارنامہ نہیں تھا‘انہوںنے کہا کہ مجھے اس بات پر فخر ہے کہ میرے ایریا میں دہشتگردی کی واردات ناکام ہوئی ‘ اللہ تعالیٰ تمام دشمنوں کی اس طرح کی سازشیں ناکام بنائے‘آمین خاتون پولیس افسر اے ایس پی کلفٹن سوہای عزیز کی بہادری کے چرچے چین تک پہنچ گئے ہیں‘ چینی سوشل میڈیا میں سوہائی عزیز کی بہادری کے ساتھ خوبصورتی کو بھی سراہا جارہا ہے‘ چینی سوشل میڈیا پر چینی نوجوان اور خواتین نے سوہائی عزیز کو چین کی سرفہرست خوبرو اداکارہ Xiaotong Guan سے مشاہبہ دیتے ہوئے ان کی تصاویر سوشل میڈیا پر پوسٹ کی ہیں‘ جن پر دیگر چینی شہریوں نے تبصرہ کرتے ہوئے انہیں خوب صورت ہیروئن او ربہادر خاتون کا خطاب دیاہے ‘ سوشل میڈیا پر سوہائی عزیز کے ساتھ چینی اداکارہ XiaotongGuan کی تصاویر بھی پوسٹ کی جارہی ہیںاور چینی شہری اس مماثلت پر بھی پسندیدگی کا اظہار کررہے ہیں‘ چینی باشندے سوہائی عزیز کی اپنی سیکورٹی کے لیے بھی فکر مند ہیں جبکہ کچھ معصوم مداحوں نے انہیں مشورہ دیاہے کہ وہ چین آجائیں اور یہیں شادی کرلیں۔
چینی شہریوں نے سوشل میڈیا پر سوہائی عزیز سمیت آپریشن میں حصہ لینے والے اہلکاروں کا شکریہ اداکیا ہے اور شہید ہونے والے افراد کو خراج عقیدت پیش کیاہے ۔

(19 بار دیکھا گیا)

تبصرے

مزید خبریں