Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
هفته 07 دسمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

قتل کے فتوے دینے والوں کیخلاف سزائیں بڑھائیں گے‘اسلامی نظریاتی کونسل

قومی نیوز بدھ 28 نومبر 2018
قتل کے فتوے دینے والوں کیخلاف سزائیں بڑھائیں گے‘اسلامی نظریاتی کونسل

اسلام آباد۔۔۔۔۔ چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل ڈاکٹر قبلہ ایاز نے کہا ہے کہ نجی سود کے خاتمے کے لئے قانون سازی کا مرحلہ مکمل ہوگیا اور اب قتل کے فتوے دینے والوں کے خلاف سزائیں بڑھائیں گے، ریاست مدینہ کے لئے اسلامی نظریاتی کونسل سفارشات دے گی،اراکین کونسل پارلیمنٹ جائیں گے، ماضی میں نظریاتی کونسل کو نظرانداز کیا گیا، اسلامی نظریاتی کونسل کے مشاورتی ادارے کے طور پر فعال ہونے سے ملک میں مذہبی منافرت اور افرا تفری دور ہوگی۔ ڈاکٹر قبلہ ایاز نے کہاکہ اجلاس میں اس بات پر تمام علماء نے اتفاق کیا کہ کسی کو واجب القتل قرار دینا یا کسی کو کافر کہنا کسی فرد یا گروہ کاکام نہیں اور اس حوالے سے تعزیرات پاکستان میں جو سزا ہے اس کو مزید سخت کیا جائے گا۔وفاقی وزیربرائے مذہبی امور پیر نور الحق قادری نے کہا ہے کہ ریاست مدینہ کے تصور کا پہلاقدم بلا سود بینکاری کی حوصلہ افزائی کرنا ہے، وزیر اعظم عمران خان اور ساری کابینہ کی یہ خواہش ہے کہ اسلامی نظریاتی کونسل سے رہنمائی لی جائے، حکومت اسلامی نظریاتی کونسل کو موثر انداز میں فعال کرنا چاہتی ہے،اسلامی نظریاتی کونسل کو توہین انبیا روکنے کے لئے عالمی قانون بنانے کے حوالے سے حکومت پاکستان کے فیصلہ سے باضابطہ طور پرآگاہ کردیا گیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے منگل کو اسلامی نظریاتی کونسل کے اجلاس کے بعد وزیر مملکت برائے پارلیمانی امور علی محمد خان اور چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل ڈاکٹر قبلہ ایاز کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا اور کہا کہ اراکین کونسل کرتارپور پر سکھوں کا استقبال کریں گے۔ وفاقی وزیر مذہبی امور نے کہاکہ اسلامی نظریاتی کونسل ایک اہم ادارہ ہے جو ریاست کے دینی اور اسلامی معاملات کی دیکھ بھال کرتا ہے اور حکومت کو مفید مشوروں سے نوازتا ہے۔ انہوں نے کہاکہ اسلامی نظریاتی کونسل کی وہ سفارشات جو قابل عمل ہیں ان پر فوری عملدرآمد ہوناچاہیے اور یہ سفارشات عوام کے سامنے بھی لائی جانی چاہئیں۔

(363 بار دیکھا گیا)

تبصرے