Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
هفته 14 دسمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

نظام مصطفی نافذ کر کے ہی ملک کو مستحکم بنایا جا سکتا ہے،شاہ عبدالحق قادری

قومی نیوز جمعرات 15 نومبر 2018
نظام مصطفی نافذ کر کے ہی ملک کو مستحکم بنایا جا سکتا ہے،شاہ عبدالحق قادری

کراچی …..امیر جماعت اہلسنّت پاکستان کراچی مولانا سید شاہ عبدالحق قادری نے کہا کہ انشاء اللہ العزیز حسب روایت ہر سال کی طرح امسال بھی عید میلادالنبی ؐ تزک واحتشام کے ساتھ باوقار انداز میں عقیدت واحترام کے ساتھ منائی جائے گی‘ عید میلادالنبی ؐ امت مسلمہ کا اپنے نبی کریم ؐ سے والہانہ وابستگی عقیدت اور غلامی کے اظہار کانام ہے ‘ اور یہی محبت اطاعت اور غلامی جزو دین ہی نہیں‘ بلکہ اصل دین اور حاصل دین ہے ‘ اسی لیے تمام عالم اسلام میں نہایت ادب واحترام سے جلوس وجلسہ میلاد النبی ؐ کا انعقاد ہوتاہے اور الحمدللہ اس پُر نور سلسلے میں ہر سال اضافہ ہورہا ہے‘ تمام انتہا پسند اور دہشت گردقوتوں کو سمجھ لینا چاہئے کہ مسلمانان عالم مصطفی جان رحمت ؐ سے اپنی محبت اور عقیدت کے اظہار کے لیے غلامی رسول میں موت بھی قبول ہے کے عقیدے پر یقین رکھتے ہیںاور اس راہ وفا میں ہر قسم کی قربانی دینے کے لیے تیار ہیں‘ انشاء اللہ جشن عید میلاد النبی ؐ کا انعقاد صبح قیامت تک جاری وساری کرے گا‘ اس موقع پر حاجی محمد حنیف طیب‘ صاحبزادہ محمد صدیق نقشبندی ‘مفتی ناصرخان‘ مولانا عبدالحفیظ معارفی‘ قاضی نورالاسلام ‘ سید رفیق شاہ ‘ مولانا الطاف قادری‘ محمد عادل ابراہیم‘ مولانا سید عبدالحق سیفی ‘ مولانا ابرار احمد رحمانی اور دیگر اکابرین موجودتھے‘انہوںنے کہا کہ گزشتہ 70 سالوں کی تاریخ گواہ ہے کہ ملک پاکستان میں نظریہ پاکستان سے متصادم مختلف نظام ہائے حکومت کو اپنایاگیا ‘ جس سے ملک میں تعمیر وترقی کی جگہ مملکت کے ہر شعبے میں انار کی اور تباہی پھیلی ہے اور اس وقت ملک پاکستان شدید بحرانی کیفیت کا شکار ہے ‘ موجودہ سخت حالات میں ریاست اور ملک بچانے کے لیے اس وطن اور عوام کو نظریہ پاکستان کے حقیقی مقصد صرف اور صرف نظام مصطفی کی ضرورت ہے‘ وہ واحد راستہ ہے ‘ جسے اختیار کرنے سے ہم اپنے پیارے وطن پاکستان کو مضبوط مستحکم اور محفوظ بنا سکتے ہیں‘ انہوںنے کہا کہ کچھ عرصہ سے متعصب مغربی استعماری قوتوں کے ناجائز اور غیر اخلاقی دبائوکو قبول کرتے ہوئے ان باطل قوتوںکے ایماء پر پاکستان کے تشخص کو تبدیل کرکے مادرپدرآزاد معاشرے کے قیام کے لیے لبرل ازم اور سیکولر ازم دین بیزار رویوں کی ریاستی سطح پر حوصلہ افزائی کی جارہی ہے۔انہوںنے کہا کہ12 ربیع الاول کا مرکزی جلوس میلادالنبی ؐ 21نومبر 2018 ء کو 3 بجے سہ پہر نیو میمن مسجد بولٹن مارکیٹ سے علماء ومشائخ کی قیادت میں برآمد ہوگا‘ جو ایم اے جناح روڈسے ہوتا ہوانشتر پارک پہنچے گا‘ جہاں علماء کرام شہر کے مرکزی عظیم الشان جلسہ عام سے خطاب کریں گے‘ جلوس اور جلسے کے تمام انتظامات کو حتمی شکل دے دی گئی ہے‘ جبکہ جماعت اہلسنّت کراچی نے نشتر پارک کے جلسہ اور عید میلادالنبی ؐ کے مرکزی جلوس اور کراچی کے تمام اضلاع کے جلوس نکالنے کا مشترکہ اجازت نامہ حاصل کرلیاہے‘علامہ سید شاہ عبدالحق قادری نے ربیع الاول کے حوالے سے کہا کہ ماضی میں دہشت گردی کے واقعات ہوتے رہے ہیں‘ اس حوالے سے جماعت اہلسنّت پاکستان کراچی کے حکومت پر زور دیاہے کہ جلوسوںاور جلسوں میں کسی ناخوشگوار واقعہ سے بچنے کے لیے پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری کی تعیناتی اور ایجنسیوں کو کڑی نگرانی کی ضرورت ہے‘ ہر ضلع میں کنٹرول روم قائم کیاجائے ا ور ان کنٹرول روم کے فون نمبر اخبارات کے ذریعے مشتہر کئے جائیں۔

(349 بار دیکھا گیا)

تبصرے