Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
پیر 18 نومبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

بارش پھر شروع ،کراچی پانی پانی ،چارسو مارکیٹیں ڈوب گئیں

قومی نیوز جمعرات 29  اگست 2019
بارش پھر شروع ،کراچی پانی پانی ،چارسو مارکیٹیں ڈوب گئیں

کراچی (کرائم رپورٹر O راﺅ عمران اشفاق) خلیج بنگال سے آنے والا مون سون کا سسٹم مضبوط ہوگیا‘ بدھ کے روز ایک گھنٹے تک گرج چمک کے ساتھ ہونے والی بارش نے تباہی مچادی.

شہر کی 40 سے زائد آبادیوں میں سیلابی کیفیت‘ کرنٹ لگنے‘ چھت گرنے اور پانی میں ڈوبنے سے 3 سگے بھائیوں سمیت 6 افراد ہلاک ہوگئے‘ شہر کی 400 مارکیٹیں بھی پانی میں ڈوب گئیں‘ تاجروں کا ایک ارب روپے سے زائد کا نقصان ہوا

شہری اداروں میں ایمرجنسی نافذ ہے سب سے کم بارش مسرور بیس پر 2 ملی میٹر اور سب سے زیادہ بارش 55 ملی میٹر نارتھ کراچی میں ہوئی‘ آج بھی وقفے وقفے سے بارش جاری رہے گی‘ محکمہ موسمیات کے مطابق بارش کا سسٹم مضبوط ہوگا‘ کل تک برستا رہے گا۔

یہ بھی پڑھیں : کراچی میں کل گرج چمک کےساتھ بارش کی پیش گوئی

اطلاعات کے مطابق خلیج بنگال سے آنے والا مون سون کا سسٹم اندرون سندھ اور حیدرآباد میں برسنے کے بعد بدھ کے روز کراچی پہنچ گیا۔ گارڈن‘ سولجر بازار‘ لیاقت آباد ‘ نارتھ کراچی اور گلشن اقبال سمیت متعدد علاقوں میں بدھ کی دوپہر کو ہی موسلا دھار بارش شروع ہوگئی تھی۔

کراچی میں کسی علاقے میں موسلا دھار بارش ہورہی تھی تو کسی علاقے میں دھوپ نکلی ہوئی تھی‘ بدھ کی رات ساڑھے 9 بجے شہر میں گرج چمک کے ساتھ طوفانی بارش ایک گھنٹے جاری رہی جس نے شہر کو ایک بار پھر پانی میں ڈبو دیا‘ ندی نالوں میں طغیانی آگئی۔

نارتھ کراچی‘ بفرزون‘ نارتھ ناظم آباد‘ اورنگی ٹاﺅن اور گلشن اقبال کی 35 کچی آبادیوں میں سیلابی ریلہ داخل ہوگیا ‘ جبکہ ڈیفنس‘ کلفٹن‘ گزری‘ پی ای سی ایچ سوسائٹی‘ کراچی ایڈمن سوسائٹی کے بنگلوں میں بھی پانی داخل ہوگیا۔ آج صبح تک شہر کی اہم سڑکیں تالاب کا منظر پیش کررہی تھیں۔

یہ بھی پڑھیں : غلاظت کی” بو“ مرادعلی شاہ کو” ہوش“ میں لے آئی

اولڈ سٹی ایریا کی 300 سے زائد مارکیٹوں میں بارش کا پانی جمع ہوگیا تھا‘ گوداموں اور بازاروں میں پانی داخل ہونے سے تاجروں کو کروڑوں روپے کا نقصان ہوا‘ جبکہ بارش شروع ہونے کے بعد بجلی کا نظام بیٹھ گیا‘ 400 سے زائد فیڈر ٹرپ ہوگئے‘ نصف سے زائد شہر میں رات بھر بجلی غائب رہی‘ آج صبح تک بجلی کی سپلائی معمول پر نہ آسکی۔

محکمہ موسمیات کے مطابق بارش کا سلسلہ دن بھر جاری رہے گا اور کل دوپہر تک اور تیز بارش رہے گی‘ سسٹم مضبوط ہوگیا‘ بارشوں کے باعث مختلف حادثات میں 3 سگے بھائیوں سمیت 6 افراد ہلاک 2 زخمی ہوگئے جبکہ سائٹ سپر ہائی وے صنعتی ایریا تھانے کی حدود سپر ہائی وے نیو سبزی منڈی کے قریب گل حسن گوٹھ میں ایک گڑھے میں بارش کا پانی جمع تھا جہاں چار سگے بھائی نہانے کی نیت سے آئے اور نہانے کے دوران پانی میں ڈوب گئے‘ ایک دوسرے کو بچانے کے نتیجے میں چاروں کی حالت غیر ہو گئی

یہ بھی پڑھیں : سڑکوں کےساتھ کراچی کی سیاست میں بھی غلاظت کے ڈھیر

اطلاع ملنے پر گل حسن گوٹھ کی زمین کے چوکیداروں اور ایک پرجیکٹ آفس کے لوگ گڑھے کے پاس بھاگے اور امدادی ٹیموں سمیت پولیس کو اطلاع دی اور ڈوبتے بچوں کو پانی سے باہر نکا لا گیا تاہم 2 بچے موقع پر ہی دم توڑ چکے تھے جبکہ 2 بچوں کو انتہائی تشویشناک حالت میں ایمبولینس کے ذریعے عباسی شہید ہسپتال پہنچایا گیا جہاں ایک اور بچے نے دوران علاج دم توڑ دیا اور ایک بچے کو طبی امداد کے ذریعے بچا لیا گیا۔

پولیس کے مطابق بچوں کی شناخت7سالہ عبدالباری ولد لال محمد،10سالہ شفیع اللہ ولد لال محمد اور6سالہ محمد نبیل ولد لال محمد کے ناموں سے ہوئی جو جاں بحق ہوئے جبکہ 5سالہ عبدالغنی جسے بچا لیا گیا ہے‘ متوفین آپس میں سگے بھائی اور افغانی ہیں جو ملا عیسیٰ گوٹھ گلشن معمار کے رہائشی تھے متوفین کا والد محنت مزدوری کرتا ہے۔

ادھر سائٹ سپرہائی وے صنعتی کے علاقے احسن آباد مشرقی سوسائٹی کے قریب ایک زیر تعمیر عمارت سے گر کر ایک شخص جاں بحق ہوگیا،جس کی لاش ایدھی کے رضاکاروں نے عباسی شہید اسپتال پہنچائی،اسپتال میں متوفی کی شناخت 45 سالہ منظور ولد جاوید کے نام سے ہوئی،کورنگی صنعتی ایریا کے علاقے کورنگی مہران ٹاﺅن میں بارش کے دوران چھت پر کام کرنے کے دوران ایک شخص گر کر 20 سالہ شاہد ہلاک ہو گیا ۔

دوسری جانب بلوچ کالو نی کے علاقے منظور کالونی میں واقع مکان کی چھت تیز بارش کے باعث گر گئی جس کی اطلاع ملتے ہی امدادی ٹیم موقع پر پہنچ گئی اور چھت کے ملبے سے 2خواتین کو شدید زخمی حالت میں نکال کر جناح اسپتال منتقل کردیا ، جہاں پر ان کی شناخت 65سالہ انیسہ زوجہ سراج ، 30سالہ صائمہ دختر سراج کے نام سے کی گئی۔

یہ بھی پڑھیں : تین حکومتیں ایک صفائی مہم کامیاب نہ کرسکیں

شاہ فیصل کالونی کے علاقے اسٹار گیٹ کے قریب بارش کے دوران مکان کی چھت گر گئی جس کی اطلاع پر امدادی ٹیم موقع پر پہنچ گئی،ملبے سے 3بچوں کو زخمی حالت میں نکال کر اسپتال منتقل کیا ،پولیس نے بتایا کہ اسپتال میں زخمیوں کی شناخت 7سالہ احمد ندیم ، 5سالہ اسماعیل ندیم اور 12سالہ انیقہ ندیم کے نام سے کی گئی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ تمام زخمیوں کی حالت خطرے سے باہر ہے۔سہراب گوٹھ کے علاقے نیو کراچی ایوب گوٹھ کچی آبادی میں واقع مکان کی چھت تیز بارش کے باعث منہدم ہو گئی جس کے نتیجے میں خاتون سمیت 3افراد زخمی ہو گئے جن کو عباسی اسپتال منتقل کیا گیا پولیس نے بتایا کہ زخمیوں کی شناخت 30سالہ منصور،55سالہ اللہ ڈنو اور 50 سالہ ممتاز بیگم زوجہ اللہ ڈینو کے نام سے کی گئی۔

(941 بار دیکھا گیا)

تبصرے