Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
بدھ 18  ستمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

آسام ،40 لاکھ مسلمانوں کو قید کرنے کی تیاریاں

قومی نیوز منگل 20  اگست 2019
آسام ،40 لاکھ مسلمانوں کو قید کرنے کی تیاریاں

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت کی مودی سرکار نے آسام کے 40 لاکھ سے زائد مسلمانوں کو غیر ملکی قرار دے کر ان کے سروں سے چھت اور پیروں تلے زمین چھین لی۔

بنگلہ دیشی تارکین وطن قرار دیئے جانے والے 40 لاکھ سے زائد آسامی مسلمانوں کو قید کرنے کی تیاریاں بھی کی جارہی ہیں

یہ بھی پڑھیں : بھارت آزاد کشمیر پر قبضے کا خواب نہ دیکھے: ترجمان پاک فوج

”نومینز لینڈ“ میں جنگی بنیادوں پر حراستی مراکز اور اوپن ایئر جیلیں تعمیر کی جارہی ہیں‘ ان جیلوں کے ارد گرد خار دار تار لگانے کے ساتھ گہرے پانی کے تالاب بھی بنائے جارہے ہیں جس میں مگرمچھ پالے جائیں گے تاکہ اوپن ایئر جیلوں میں قید آسامی مسلمانوں کو فرار ہونے سے روکا جاسکے۔

”آسام ٹربیون“ نے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ بنگلہ دیش اور میانمار کی سرحدوں سے منسلک آسام کی ریاست کے 40 لاکھ مسلمانوں کی شہریت سلب کرلی گئی ہے اور اُن کے نام تارکین وطن کی حتمی فہرست میں ڈالی جاچکی ہے۔

یہ بھی پڑھیں : ڈیڑھ ارب آ بادی پر” جوہری تلوار“ لٹکنے لگی

آسام ٹربیون کے مطابق بنگلہ دیشی بنگلہ دیشی وزیراعظم حسینہ واجد کے ساتھ ایک معاہدے کی مدد سے 40 لاکھ سے زائد مسلمانوں کو بنگلہ دیش میں دھکیلنا چاہتی ہے لیکن حسینہ واجد نے ایک بھی بھارتی شہری کو بنگلہ دیش میں قبول کرنے سے انکار کردیا ہے جس کے بعد آسام کے سرحدی علاقے میں بڑی اوپن ایئر جیلیں بنانے کی تیاریاں شروع کردی گئی ہیں

آسام کے مسلم ذرائع کے مطابق آسام میں ساڑھے 7 لاکھ سے زائد مسلمانوں کو گرفتار کرکے حراستی مراکز پہنچایا جاچکا ہے اور آسامی مسلمانوں کی بین الاضلاعی نقل و حرکت ختم ہوچکی ہے‘ کیونکہ بھارتی سیکورٹی فورسز سڑکوں پر مسلمانوں کو پکڑ رہی ہے۔

(930 بار دیکھا گیا)

تبصرے