Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
جمعه 13 دسمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

سگریٹ پر 10 روپے گناہ ٹیکس کی منظوری

قومی نیوز بدھ 29 مئی 2019
سگریٹ پر 10 روپے گناہ ٹیکس کی منظوری

اسلام آباد… وفاقی کابینہ نے شمالی وزیرستان میں پاک فوج کی چیک پوسٹ پر حملہ کی مذمت کرتے ہوئے شہید اہلکار کیلئے دعائے مغفرت اور زخمیوں کی صحت یابی کیلئے دعا کی ہے۔

کابینہ نے واضح کیا کہ پرچم کی توہین کرنے اور ملک کے تشخص اور وقار کو مجروح کرنے والوں سے کوئی رعایت نہیں کی جا ئے گی،شمالی وزیرستان میں ترقی دشمنوں نے عالمی طاقتوں کے ہاتھوں کھیل کر امن دائو پر لگایا،ریاست کی رٹ چیلنج کرنیوالوں کیخلاف زیروٹالرنس ہوگی ، کابینہ نے افواج پاکستان سے یکجہتی کا اظہار کیا

کابینہ نے فیصلہ کیا کہ سگریٹ اور سافٹ ڈرنکس کی حوصلہ شکنی کیلئے ان پر اضافی ہیلتھ ٹیکس عائد کیا جائیگا‘ ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے وزارت قومی صحت کی سفارش پر آئندہ مالی سال کے دوران ٹوبیکو انڈسٹری پر ٹیکس بڑھانے کے پلان کی منظوری دیدی جس کے مطابق سگریٹ پیکٹ پر 10روپے گناہ ٹیکس اورشوگرڈرنکس پر ایک فیصد ہیلتھ ٹیکس لیا جائیگا۔

وفاقی کابینہ نے مسلم لیگ ن کے دورحکومت میں سگریٹ کی فروخت پر متعارف کروایا گیا فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی کا تیسرا سلیب بھی ختم کرنے کی اجازت دیدی ہے۔

تیسرا سلیب ختم ہونے اور ہیلتھ ٹیکس کے نفاذ سے سالانہ 45ارب روپے سے زائد رقم جمع ہوگی۔ ہیلتھ ٹیکس سے جمع ہونیوالی رقم ہیلتھ انشورنس سکیم اور مہلک امراض کے علاج پر خرچ کی جائیگی۔

یہ بھی پڑھیں : شیخ رشید غائب سیاسی حلقوں میں تجسس

وزارت نیشنل ہیلتھ ریگولیشن نے وفاقی کابینہ کے اجلاس میں ہیلتھ لیوی بل کے ذریعے 20سگریٹ پیکٹ پر 10روپے گناہ ٹیکس اور 250ملی لیٹرکی شوگر ڈرنک پر 1روپیہ فی بوتل ہیلتھ ٹیکس لگانے کی سفارش کی تھی کابینہ نے کچھی کنال کرپشن کیس کو تحقیقات کیلئے ایف آئی اے کے حوالے کرنے کی منظوری دے دی جو اس ضمن میں اپنی کارروائی ایک ماہ کے اندر مکمل کریگا

جبکہ وزیراعظم نے وزرا کوکفایت شعاری مہم پرعملدرآمدکی ہدایت کرتے ہوئے کہاکہ پیٹ پرپتھرباندھ لیں، وزیرِ اعظم نے بچوں کیساتھ جنسی زیادتی کے واقعات کا سختی سے نوٹس لیتے ہوئے کہا کہ اس طرح کے جرائم میں ملوث افراد کو سزائے موت دینے کیلئے قانون سازی کی جائے

کابینہ کو بتایا گیا کہ مختلف وزارتوں کی جانب سے اب تک 31اثاثہ جات کی نجکاری کی تجویز کی گئی ہے۔ ان میں کامرس، پاکستان پوسٹ، وزارتِ صنعت، فیڈرل بورڈ آف ریوینو، ایرا، کابینہ ڈویڑن اور وزارتِ اطلاعات کے اثاثہ جات شامل ہیںجبکہ معاون خصوصی اطلاعات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہاہے کہ مختلف محکموں کی 31پراپرٹیز کی نشاندہی کی گئی ہے،ان سرکاری املاک کاغلط استعمال ہوا‘مریم صفدر بار بار ایسی زبان استعمال کرتی ہیں جس کی معاشرتی اقدار اجازت نہیں دیتی ‘لوٹاہوامال غنیمت واپس لائیں گے۔

وفاقی کابینہ کااجلاس وزیر اعظم عمران خان کی زیرصدارت ہوا جس میںفیصلہ کیاگیاکہ بجٹ 11جون کوپیش کیاجائیگا، مشیر خزانہ حفیظ شیخ نے بجٹ حکمت عملی 20-2019 کی دستاویزات پر اراکین کو بریفنگ دی۔کابینہ کو بتایا گیا کہ آئندہ بجٹ کفایت شعاری پرمبنی ہوگا۔

(1592 بار دیکھا گیا)

تبصرے