Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
بدھ 18  ستمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

اقتصادی پابندیاں،دنیا بھر کی تیل سپلائی روک دینگے، ایران

ویب ڈیسک پیر 29 اپریل 2019
اقتصادی پابندیاں،دنیا بھر کی تیل سپلائی روک دینگے، ایران

تہران …ایران نے اقتصادی پابندیاں نہ ہٹانے کی صورت میں خلیجی ممالک سے دنیا کو تیل سپلائی کرنے والی واحد بحری گزرگاہ آبنائے ہرمز کو بند کرنے کی دھمکی دی ہے۔ادھرایرانی وزیر خارجہ کاکہنا ہے کہ امریکی پابندیوں پر جوہری معاہدے کے خاتمے سمیت کئی آپشن موجود ہیں جبکہ جواد ظریف نے امریکی حریف شمالی کوریا جانے کی بھی بات کی ہے۔

ایران کی مسلح افواج کے سربراہ نے خبردار کیا ہے کہ اگر ان کے ملک کے خلاف مزید معاندانہ اقدامات کیے جاتے ہیں تو اہم آبی گذرگاہ آ بنائے ہْرمز کو بند کر دیا جائے گا۔مسلح افواج کے چیف آ ف اسٹاف جنرل محمد حسین باقری نے اتوار کے روز ایرانی خبررساں ایجنسی ایسنا سے گفتگو میں کہا کہ ’’ ہم آ بنائے ہْرمز کو بند نہیں کرنا چاہتے ہیں لیکن اگر دشمنوں کے مخالفانہ اقدامات میں شدت آ تی ہے تو ہم اس کو بند کردیں گے‘‘۔

انھوں نے یہ بھی دھمکی دی ہے کہ اگر ایران کے تیل کو آ بنائے ہرمز سے نہیں گزرنے دیا جاتا تو پھر یقینی طور پر دوسرے ممالک کے تیل کا راستہ بھی مسدودکردیا جائے گا۔جنرل باقری نے یہ انتباہ امریکا کے گذشتہ پیر کے ایک بیان کے ردعمل میں جاری کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : ایرانی تیل پرامریکی پابندی ،بڑا بحران شروع

اس کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایران سے تیل کے خریدار ممالک بھارت ، چین اور ترکی وغیرہ کو پابندیوں سے حاصل استثنا مئی سے ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور اب امریکا ان کے خلاف بھی جون میں ایران سے تیل خرید کرنے کی صورت میں پابندیاں عائد کردے گا۔

ادھر ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے بدھ کو ایک بیان میں اس یقین کا اظہار کیا تھا کہ ’’ ایران اپنے تیل کی فروخت جاری رکھے گا اور آ بنائے ہْرمز کو بھی استعمال کرتا رہے گا لیکن اگر امریکا ہمیں ایسا کرنے سے روکنے کے لیے کوئی احمقانہ اقدام کرتا ہے تو پھر اس کو بھی مضمرات کے لیے تیار رہنا چاہیے‘‘۔

انھوں نے مزید کہا’’ یہ ہمارے قومی سلامتی کے وسیع تر مفاد میں ہے کہ خلیج فارس کھلی رہے اور آ بنائے ہْرمز بھی کھلی رہے۔ ہم نے ماضی میں بھی ایسا کیا ہے اور مستقبل میں بھی یہ سلسلہ جاری رکھیں گے‘‘۔

(478 بار دیکھا گیا)

تبصرے