Qaumi Akhbar
Loading site
قومی اخبار
هفته 07 دسمبر 2019
LZ_SITE_TITLE
 
New World of Online News

گٹکے پر پابندی پولیس کی چاندی

ارشد انصاری جمعه 15 فروری 2019
گٹکے پر پابندی پولیس کی چاندی

سمگل شد ہ ا شیاء غیر قا نو نی د ھند ے کا ر و با رکرنے وا لو ں اور اس نیٹ ورک سے جڑ ے ہر وہ شخص جو ا نسانی جا نو ںکو نقصان پہنچا نے اور مضر صحت ا شیا ء کی خر ید و فر و خت کر نے میں ملو ث پا یا جا تا ہے‘ اسکے خلا ف ر یا ست کے متعلقہ ادا رو ں کی جا نب سے کا رر وائیا ں کر نے ان کے فرائض میں سب سے اہم ذمہ داری تصو ر کی جا تی ہے اور ریا ست سے جڑے متعلقہ ادا رو ںکی جا نب سے ان ملزمان یا ملوث افراد کے خلا ف کا رر وائی کرنے کا عمل بسا اوقات کمز ور ر یا ست رو ی یا پھر عدم تو جہی اور تو اور غفلت کا مظا ہرہ کر نے کا عمل بھی دیکھا جا تاہے یا مشاہدے میں آ تا ہے جس کے سبب اسمگل شدہ ا شیاء کی اسمگلنگ اور غیر قا نونی د ھند ے جس پر قا نونی پابندیا ں لگا دی گئی ہیں یاان کاروبار کر نے والوںکے نیٹ ورک کے ز ر یعے‘انسا نی جا نو ں کو نقصان پہنچنے خد شہ ہو ان ملز مان یا ملو ث افراد کارندوں منشیا ت فر و شوںکے خلا ف کا رروائی عمل میںلا نا ر یا ست کے متعلقہ ادا رو ںکی ذمہ داریوں میں ایک اہم زمہ داری تصو ر کیا جا تاہے‘ حیدر آباد شہر پا کستان کے بڑے شہر و ں میں تصو ر کیا جا تاہے‘ جس میں پو لیس اینٹی نا رکو ٹکس ایف آ ئی اے کسٹم سمیت دیگر ریا ست کے ادا رو ں کی جانب سے معا شر تی برائیو ں کے خلا ف کا رر وائیا ںکی جا تی رہی ہیں اور ان نیٹ ورک کا لے دھند و ں اور جان لیو ا کا رو بار کرنے والوںکے خلا ف کا ررو ائیو ںکے نتیجے میں اسمگل شد ہ سا مان کپڑ ے ٹا ئر گٹکے کی بڑی کھیپ اور منشیات سمیت مین پوری اور اد و یا ت بھی بر آمد کر کے پو لیس تھا نو ں اور دیگر ا دا رو ں کے اہلکا رو ںکی جانب سے کا رر وائیا ں کر نے کے عمل کو بسا او قا ت شہر یو ںکی جانب سے سہر ا ہا گیا ہے‘ لیکن قا بل غور یہ با ت ہے کہ ایس ایس پی حیدر آباد سر فر ا زنو ا ز شیخ کی جا نب سے ضلع بھر کے تھانید ا رو ںکو پا بندکیا گیا ہے‘ کہ وہ اپنی حد ود میں غیر قا نو نی دھند ے کر نے وا لو ں اور مین پو ری و گٹکے کے ڈیلر و ں کے خلا ف کا ررو ائی کے عمل کو تیز تر کر دیں‘ جس پر دکھاو ے کے طو رپر ایک 2کا رروائی مختلف تھا نو ںکی پو لیس نے کی ہے جس میں کہیں 100 دو 100 مین پوری کے ساشے اور کہیں غیر ملکی اسمگل شدہ سینکڑ و ں گٹکے کے پیکٹ کی بر آمد گی ظا ہر کر کے اپنے فرائض کو مکمل سمجھتی پولیس دکھا ئی دیتی ہے اصل حقیقت یہ ہے کہ لطیف آ باد یونٹ نمبر 11 کے علا قے میں سب سے بڑے مین پوری و ا سمگل شدہ گٹکے کے ڈیلر اسد نامی شخص کے بارے میں بتا یا جاتاہے جو کہ پو لیس کے بعض افسران و اہلکا رو ں اور مختلف سیا سی و سماجی نمائند و ں سمیت نام نہا د صحا فتی ادا رو ں سے وابستہ ظا ہر کر نے والے نما ئند و ں با لخصوص اے سیکشن تھانے کے اے ایس آ ئی دین محمد کی سر پر ستی کو اپنا جینا او ڑنا اور اس دھند ے کو جا ری و ساری ر کھتے ہوئے پو لیس اوردیگر ادا رو ںکی نمائند گی کر نے والے کی آشیر با د کو اپنے تحفظ کی ضما نت قر ا ر دیتے آ ر ہا ہے اور بڑی آ با دی جو کہ لطیف آ با دمیں محیط ہے ان مین پو ری و گٹکے مافیاکی سر پر ستی بڑے ڈ یلر میں ا سد نا می شخص کر ر ہا ہے‘ذ رائع کے مطا بق اے سیکشن تھانے پر تعینا ت اے ایس آ ئی دین محمد جو کہ ڈیلر اسد کا بہنو ئی ہے مکمل سر پر ستی کر تے ہوئے لطیف آباد یو نٹ نمبر 11 کے بازار سے ملحقہ گلی میں اپنے گھر کے با ہر ٹیبل کرسیاں لگا کر کھلے عام مضر صحت مین پوری و ا سمگل شدہ گٹکے فر و خت کر تا د کھا ئی دے ر ہا ہے‘ جبکہ اے سیکشن تھانے کے ایس ایچ اور عمر ان ر شید کی ایمانداری کے چر چے لطیف آباد اے سیکشن تھانے کی پو لیس سمیت حیدر آباد کے بعض پولیس افسرا ن کر تے دکھائی دیتے ہیںلیکن نہ جا نے کیو ں ایس ایس پی حیدر آباد کی خصوصی ٹیم اور خو د ایس ایچ او عمرن ر شید اپنے پیٹی بھا ئی دین محمد کو پا بند ی کے با وجو د مین پوری و گٹکے کی فر و خت کر نے والے اسد عابد جا وید سعید ‘ منشی اکرم ار شد ارشا د سمیت دیگر چھوٹے مو ٹے ڈیلر ز اسد نا می ڈیلر کے زیر سر پر ستی نیٹ ورک کو قا ئم کیے ہو ئے ہیں ‘جبکہ حیدر آباد سٹی کے علا قے پنجر ہ پو ل ‘گلفشاء بخا ری‘ لو ہا ر پا ڑ ا‘ ٹنڈو میر محمو د‘ملت آ باد‘پھلیلی ‘ پر یٹ آ باد سمیت دیگر علا قوں میں بھی در جنو ں مین پوری و گٹکے ڈیلر ز کے کارخانے مو جو د ہیں‘متعلقہ تھا نو ںکی پو لیس انکے خلا ف کا رر وائی کیو ں عمل نہیں لا ئی جا رہی ہے توٓاصل حقا ئق بھی سامنے آ رہے ہیں‘ جس میں ذ رائع نے بتایا ہے کہ لا کھو ں کی بھتہ ان مین پو ری ڈیلر زاور با لخصوص بڑ ے ڈیلر اسد نامی شخص سے و صول کر نے میں پولیس اسپیشل بر انچ اینٹی نا رکو ٹکس کے بعض اہلکارو ں اور سی آ ئی اے جبکہ مختلف ڈی ایس پیز کے بیٹر ز بھی شامل بتائے جا تے ہیں تو بھیا یہ غیر قا نونی دھند ے انسانی جا ن لیو ا کا ر و بار کر نے وا لو ں کی سرپر ستی جب پو لیس اور اسپیشل بر انچ سمیت سی آئی اے کے بعض افسران واہلکار ملو ث ہوں تو کیسے گلی گلی مین پوری و گٹکے کی فر و خت کا خا تمہ ممکن ہو سکتاہے‘ جبکہ پو لیس کے ا علیٰ حکام اور ڈی آ ئی جی ایس ایس پی حیدر آباد سر فرا ز نو ا ز شیخ کی کا و شو ں کو یہ منظم پو لیس کی کا لی بھیڑ یں ‘نا کام بنا نے میں ملو ث ہیں‘ اس تمام تر صو ر تحال کے پیش نظر مختلف سیا سی و سما جی اور علا قا ئی تنظیمو ں کے رہنما ئو ں جبکہ بعض معا شر تی برائیو ں کا خا تمہ بلند کر نے والی شخصیا ت کی جا نب سے ایس ایس پی حیدر آباد سر فرا ز نو ا زشیخ اور بعض پولیس افسران کو شکا یا ت کی گئیں لیکن ان جا ن لیو ا کارو بار کرنے والے مین پوری و گٹکے ما فیاکے نیٹ ورک کا خا تمہ نہیں ہو سکا ہے‘ جس کے سبب حیدر آبادمیں گلے کے کینسر‘ منہ اور پیٹ کے مو ذی امر ا ض میں سینکڑو ں افراد مبتلا ہو کر ا سپتا لو ں میں دا خل ہیں اور درجنو ں افراد مین پوری و گٹکے کے ا ستعما ل کے سبب اپنی جانیں گنو ا بیٹھیںہیں‘ حیدر آباد کے شہر یو ں نے متعلقہ ادا رو ں سے مطا لبہ کیا ہے کہ مین پوری و گٹکے مافیا کے نیٹ ورک سے وا بستہ ڈ یلر ز اور افر اد اور پولیس کی کا لی بھیڑ و ں کے خلا ف کا رر وائی کی جا ئے‘ تاکہ مز ید حیدر آباد کے شہر ی منہ کا کینسر اور گلے‘ جبکہ پیٹ سمیت دیگر مو ذی امر ا ض سے محفو ظ رہ سکیں‘ لیکن یہ ا س صو ر ت میں ہو سکتاہے‘ جب پولیس اور متعلقہ ادا رو ں کے اہلکا رو ںکی جا نب سے معا شرتی بر ائیو ں کا خا تمہ کر نے کا عز م ہو اور مین پو ری و گٹکے کے ڈیلر ز کی فر وخت کے نیٹ ورک کے خلا ف کارروائی بے ر حما نہ کی جا ئے۔

(267 بار دیکھا گیا)

تبصرے